صبح سویرے ٗ اسٹیل ٹائون میں ٗ پولیس نے 2اغواء کار مارڈالے

September 12, 2017 11:56 amViews: 7

پولیس نے اغواء کاروں کی موجودگی کی اطلاع پر کارروائی کی تھی ٗ ملزموںکے گروہ کا سرغنہ اپنے ہی ساتھیوں کی فائرنگ سے مارا گیا ٗ پولیس
اغواء کاروں کے ٹھکانے کو پولیس نے چاروں طرف سے گھیرے میں لیا ہوا تھا ٗ دونوں طرف سے کافی دیر تک فائرنگ کا تبادلہ ہوتا رہا ٗمقابلے میں ایک ملزم پولیس کی فائرنگ سے ہلاک ہوا ٗ سرغنہ کو اپنے ہی ساتھیوں کی گولی لگ گئی
اغواء کاروں کے تین ساتھی فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے جن کی تلاش جاری ہے ٗواقعہ کے بعد پولیس نے علاقے میں سرچ آپریشن شروع کردیا ٗ مارے جانیوالوں کے قبضے سے مغوی کی گاڑی برآمد
کراچی( کرائم رپورٹر) صبح سویرے اینٹی وائیلنٹ کرائم سیل کی بن قاسم کے علاقے میں کارروائی‘ مقابلہ2 اغوا کار مارے گئے جبکہ ان کے 3 ساتھی فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔ پولیس نے اسلحہ اور مغوی کی گاڑی برآمد کرلی۔ تفصیلات کے مطابق صبح سویرے اینٹی وائیلنٹ کرائم سیل پولیس نے بن قاسم کے علاقے اسٹیل ٹائون میں اغواء کاروں کی موجودگی کی اطلاع پر چھاپہ مارا اور ملزمان کے ٹھکانے کو چاروں اطراف سے گھیرے میں لے لیا جس پر ملزمان نے پولیس پر اندھا دھند فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں اغواء کار گروہ کا سربراہ اپنے ہی ساتھیوں کی فائرنگ سے ہلاک ہوگیا جبکہ ایک اور ملزم حیدر علی عرف راجو عرف ببلو ولد محمد نثار رند بھی مقابلے میں ہلاک ہوگئے۔ پولیس نے دونوں اغواء کاروں کی لاشوں کو تحویل میں لے کر ضابطے کی کارروائی کیلئے اسپتال منتقل کیا اور علاقے کو گھیرے میں لے کر سرچ آپریشن کیا گیا۔ لیکن اغواء کاروں کے3 ساتھی فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے جن کی تلاش جاری ہے۔ ایس ایس پی اے وی سی سی عبداللہ احمد کے مطابق چھاپے کے دوران فائرنگ سے نشاندہی کرنے والا اغواء کار عبدالمالک عرف حاجی ولد دوست محمد اپنے ساتھیوں کی فائرنگ سے ہلاک ہوگیا جبکہ مارے جانیوالے ملزمان کے قبضے سے اسلحہ اور مغوی سعود کی گاڑی ٹویوٹا کورولا برآمد کی گئی ہے۔ ایس ایس پی اے وی سی سی کے مطابق مغوی کو پولیس پارٹی پہلے ہی بازیاب کراچکی ہے۔ پولیس نے مزید بتایا کہ مذکورہ مقابلہ تقریباً آدھے گھنٹے تک جاری رہا ہے اور فائرنگ کی وجہ سے پورے علااقے میں خوف و ہراس پھیل گیا تھا اور علاقہ مکین گھروں میں محصور ہو کررہ گئے تھے۔ پولیس نے بتایا کہ مقابلے میں مارے جانیوالا ملزم حیدر علی پولیس اہلکار کے قتل میں بھی ملوث تھا۔ ملزم نے2015 ء میں سائٹ بی کے علاقے میں پولیس اہلکار عادل نواز کو شیر اور صداقت حسین کو زخمی کیا تھا جس کا مقدمہ سائٹ بی تھانے میں درج ہے۔ پولیس واقعے کی مزید تفتیش کررہی ہے۔