کرنٹ لگنے سے بچے کی ہلاکت کے الیکٹرک کیخلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم

September 19, 2017 3:26 pm0 commentsViews: 5

23اگست کو ماڈل کالونی میں بارش کے دوران کھمبے میں کرنٹ آنے سے8سالہ اذہان جاں بحق ہوگیا تھا
پولیس کی جانب سے تاخیری حربے استعمال کئے جارہے تھے جس پر والدین نے عدالت سے رجوع کرلیا
کراچی(اسٹاف رپورٹر) ضلع شرقی کے سیشن جج نے ماڈل کالونی میں بارش کے دوران کرنٹ لگنے سے 8 سالہ بچے کی موت پر کے الیکٹرک کے سی ای او اور چیئرمین کیخلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا۔تفصیلات کے مطابق 23اگست کو ماڈل کالونی میں جماعت اسلامی ضلع شر قی کے نائب امیر اور یوسی کے وائس چیئر مین تو فیق الدین کا بھتیجا 8سالہ اذہان حالیہ بارشوں میں کے الیکٹرک کے کھمبے میں کرنٹ آنے سے جاں بحق ہو گیا تھا ۔کھمبے میں کر نٹ آنے کی اطلاع کے الیکٹرک کے شکایتی مرکز اور متعلقہ ذمہ داران کو کئی بار کی گئی مگر ان کی طرف سے مجرمانہ غفلت اور لاپرواہی کا مظاہرہ کیا گیا اور معصوم اذہان لقمہ اجل بن گیا ۔توفیق الدین اور بچے کے اہل خانہ نے اس پر شدید احتجاج کیا اور ماڈل کالونی تھانے میں کے الیکٹرک کے چیئر مین اور سی ای او کے خلاف مقدمہ درج کرانے کی درخواست جمع کرائی ،مگر پولیس کی جانب سے مسلسل تاخیری حربے استعمال کیے گئے اور دبائو ڈالا گیا کہ ایف آئی آر میں کے الیکٹرک کے چیئر مین اور سی ای او کا نام نکال دیا جائے لیکن بچے کے اہل خانہ نے کسی بھی قسم کے دبائو کو مسترد کر دیا اور مقدمے کے اندراج کے لیے ضلع شر قی کی سیشن عدالت سے رجوع کیا ۔عدالت نے درخواست گزار کے موقف کو تسلیم کر تے ہوئے پولیس کو حکم دیا ہے کہ کے الیکٹرک کے چیئر مین اور سی ای او کے خلاف بچے کی ہلاکت کا مقدمہ درج کیا جائے ۔