مہنگائی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی

December 5, 2018 11:25 am0 commentsViews: 1

عوام کیلئے دو وقت کی روٹی کا حصول مشکل ہوگیا ٗ حکومت کومہنگائی پر قابو پانے کیلئے طویل اقدامات کی ضرورت ہے
مرغی 19فیصد مہنگی ٗ انڈے 9فیصد ٗ پیٹرول 5اور ڈیزل 7ٗ مونگ کی دال 2ٗ ماش ساڑھے 3فیصد مہنگی ہوگئیں
کراچی( مانیٹرنگ ڈیسک) روز مرہ استعمال کی اشیاء کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ ہوا‘ مہنگائی کی شرح میں ساڑھے چھ فیصد ریکارڈ کیا گیا ‘ ادارہ شماریات کے مطابق نومبرمیں مہنگائی کی شرح میں 6 اعشاریہ5 فیصد اضافہ ہوا جبکہ اکتوبر میں مہنگائی کی شرح6 اعشاریہ8 فیصد ریکارڈ کی گئی تھی۔د وسری جانب جولائی سے نومبر کے دوران مہنگائی کی شرح6 اعشاریہ 2فیصد رہی۔ نومبر میں مرغی 19 فیصد مہنگی‘ انڈوں کی قیمت میں 9 فیصد اضافہ‘ پیٹرول5 فیصد اور ڈیزل7فیصد مہنگا ہوا۔ اس کے علاوہ مونگ کی دال 2 فیصد‘ ماش ساڑھے3 فیصد مہنگی‘ ڈیری مصنوعات ڈھائی فیصد مہنگی ہوئی جبکہ سیمنٹ کی قیمت میں 2 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ معاشی تجزیہ کاروں کے مطابق اس وقت ملک میں مہنگائی 4 سال کی بلند ترین سطح کو چھو چکی ہے۔ بڑھتی ہوئی مہنگائی نے عوام کیلئے دو وقت کی روٹی کا حصول بھی مشکل بنادیا۔ حکومت کو مہنگائی پر قابو پانے کیلئے ٹھوس اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔