اسکول بند کرنے ہیں تو کردیں فیسوں میں کمی کے حکم پر عملدرآمد لازمی ہوگا چیف جسٹس

January 11, 2019 12:24 pm0 commentsViews: 6

کئی اسکول ہیں جنہوں نے گیراج سے کام شروع کیا، اربوں روپے کمائے جارہے ہیں، جسٹس ثاقب نثار
پرائیویٹ اسکولوں کی جانب سے زائد فیسوں سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس
اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک) عدالت عظمیٰ کے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے پرائیویٹ اسکولوں کی جانب سے زائد فیسوں سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیئے ہیں کہ فیسوں میں کمی کے حکم پر عملدرآمد لازمی ہوگا۔ اسکول بند کرنے ہیں تو کردیے جائیں۔ اربوں روپے اسکولوں سے کمائے جارہے ہیں‘ کئی ایسے اسکول ہیں جنہوں نے ایک گیراج سے کام شروع کیا۔ جمعرات کو عدالت عظمیٰ میں چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے نجی اسکولوں کی زائد فیسوں سے متعلق کیس کی سماعت کی جس میں سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر‘ پرائیویٹ اسکولز ایسوسی ایشن کے صدر سمیت سیکریٹری لاء اینڈ جسٹس کمیشن عدالت میں پیش ہوئے۔ دوران سماعت پرائیویٹ اسکولز ایسوسی ایشن کے صدر زعفران الٰہی نے موقف اپنایا کہ عدالت نے ایک ماہ کی فیس واپس کرنے کا حکم دیا ہے عدالتی حکم پر عمل سے تو اسکول بند ہوجائیں گے جس پر چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ فیسوں میں کمی کے حکم پر عملدرآمد لازمی ہوگا اسکول بند کرنے ہیں تو کردیں۔ چیف جسٹس نے کہا کہ فیس میں کمی کا فیصلہ تمام نجی اسکولوں کیلئے ہے جو اسکول اس فیصلے پر عمل نہیں کررہے وہ توہین عدالت کے مرتکب ہورہے ہیں۔