خلا میں ایک روزے کے دوران16 بار سحری و افطاری

May 14, 2019 12:08 pm0 commentsViews: 132

جکارتہ( مانیٹرنگ ڈیسک) اگر ہر ڈیڑھ گھنٹے بعد افطاری اور سحری کرنی پڑ جائے تو رمضان المبارک کا روزہ رکھنا کتنا پیچیدہ ہوجائے گا اور اس مشکل صورتحال سے نکلنے کا کوئی حل بھی نہیں۔ اس کے باوجود یہ چیلنج ایک انڈونیشن مسلمان شیخ مظفر شکور نے قبول کیا اور فرض پوری جانفشانی سے نبھایا۔ سال 2007ء میں شیخ مظفر شکور کو انٹرنیشنل اسپیس اسٹیشن کے ایک مشن پر خلا میں جانا تھا۔ رمضان المبارک میں روزہ رکھنا اور نماز پڑھنا ان کیلئے انتہائی مشکل صورتحال کا سبب بنا۔ خلائی اسٹیشن زمین کے گرد ڈیڑھ گھنٹے میں چکر مکمل کرلیا ہے اور ہر 24 گھنٹے کے دوران16 بار دن‘ رات کا سامنا ہوتا ہے۔ یعنی ہر ڈیڑھ گھنٹے بعد سحری اور افطاری ہوتی ہے۔