سرجانی ٹائون میں ٗ سرکاری زمینوں کی چائنا کٹنگ عروج پر پہنچ گئی

May 15, 2019 12:22 pm0 commentsViews: 4

لینڈ مافیا گروپ نے کے ڈی اے افسران کی ملی بھگت سے سیکڑ 9بھینس کالونی سے متصل کمرشل پٹی پر قبضہ کرکے درجنوں پلاٹ کاٹ دئیے
وزیر بلدیات ٗ سعید غنی کی خاموشی ٗ علاقہ مکینوں کو آواز اٹھانے پر دھمکیاں ٗ وہ اپنے مکانات اور پلاٹ کی خیر منائیں ٗ پولیس سرپرستی میں لوٹ مار جاری
کراچی (اسٹاف رپورٹر) عدالتی احکامات اور اداروں کی جانب سے بھرپور کارروائی کے باوجود سرجانی ٹائون میں سرکاری زمینوں کی لوٹ مار کا سلسلہ تاحال جاری ہے۔ ایک منظم لینڈ مافیا گروپ نے کے ڈی اے کے بعض افسران کی ملی بھگت سے سرجانی ٹائون سیکٹر 9 بھینس کالونی سے متصل کمرشل پٹی پر قبضہ کرکے چائنا کٹنگ کے ذریعے درجنوں پلاٹ کاٹ دیے ہیں۔ ذرائع کے مطابق علاقہ مکینوں نے جب لینڈ مافیا کے خلاف آواز اٹھانے کی کوشش کی تو انہیں ڈرایا دھمکایا جارہا ہے اور ان سے کہا جارہا ہے کہ وہ اپنے مکانات و پلاٹ کی خیر منائیں، علاقے سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق قبضہ مافیا اتنا طاقتور ہے کہ کے ڈی اے کے افسران کی ملی بھگت سے کھلے عام دو نمبر چالان بنا کر چائنا کٹنگ کے پلاٹ فروخت کر رہا ہے اور اس گھنائونے کاروبار میں مافیا کو ویسٹ پولیس سمیت بعض بااثر شخصیات کی سرپرستی حاصل ہے۔ ذرائع کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کونسل کے رکن و ضلع وسطی کے رہنما سہیل سمیع دہلوی نے صورتحال سے پی پی سندھ کے رہنمائوں کو تحریری طور پر آگاہ بھی کیا تھا اور وزیر بلدیات سعید غنی نے ان اطلاعات پر تحقیقات کا حکم دیتے ہوئے رپورٹ طلب کی تھی لیکن کے ڈی اے کے افسران اور لینڈ مافیا نے وزیر بلدیات کے احکامات بھی ہوا میں اڑا دیے ہیں۔