خطرناک قرار دی گئی عمارتیں خالی کردی جائیں بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی

May 17, 2019 12:15 pm0 commentsViews: 2

مون سون کی بارشوں کا سلسلہ شروع ہونے والا ہے، بوسیدہ عمارتوں کے زمیں بوس ہونے کے خدشات ہیں
بوسیدہ عمارتوں میں رہنے والے اپنی اور اہل خانہ کی جان و مال کے تحفظ کے لئے کہیں اور منتقل ہوجائیں
کراچی (وقائع نگار) سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی نے ٹیکنیکل کمیٹی کی جانب سے خطرناک قرار دی گئی عمارتوں کے مکینوں کو متنبہ کیا ہے کہ اپنی اور اپنے اہل خانہ کی جان و مال کے تحفظ کی خاطر ان عمارتوں کے استعمال کو فوری تَرک کر کے انہیں خالی کردیا جائے۔ ماہرین موسمیات کی حالیہ پیشگوئیوں کے مطابق صوبے میں مون سون بارشوں کا سلسلہ شروع ہونے والا ہے۔ واضح رہے کہ بارش کے سبب بوسیدہ اور خستہ حالت عمارتوں کے حادثاتی طور پر زمین بوس ہونے کے امکانات میں کئی گنا اضافہ ہو جاتا ہے۔ اس لیے قیمتی انسانی جانوں کے نقصان کے خدشات اور اس کے سبب اندوہناک انسانی المیے سے تحفظ کے پیش نظر خطرناک قرار دی گئی عمارتوں کو فوری خالی کر دیا جائے۔ علاوہ ازیں ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگز کنٹرول اتھارٹی افتخار علی قائم خانی کی ہدایات پر ماہرین تعمیرات و انجینئرز پر مشتمل کمیٹی برائے خطرناک عمارات کی جانب سے سروے کا کام تسلسل سے جاری ہے اس سلسلے میں شہری اپنے ارد گرد کسی بھی مخدوش و تباہ حالت بلڈنگ اور ناقص و غیر معیاری تعمیرات کی حامل بلڈنگ کی اطلاع ایس بی سی اے کو فون نمبر 021-99232354 پر دے سکتے ہیں۔