ندیم نصرت اور واسع جلیل کو قتل کی دھمکی پر قیصر علی کو جیل

May 22, 2019 12:33 pm0 commentsViews: 2

ایم کیو ایم لندن کے رہنماکو ایک سال قید، ایک ماہ کی جیل اور 11 مہینے کیلئے معطل کردیا
لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)ایم کیو ایم لندن میری لینڈ چیپٹر کے رہنما قیصر علی کو پارٹی کے سابق رہنماؤں ندیم نصرت، ان کی اہلیہ اور واسع جلیل کو جان سے مارنے کی دھمکیاں دینے پر ایک سال کی قید، ایک ماہ کی جیل اور 11 مہینے کے لیے معطل کردیا۔ورجینیا کی فئیرفیکس کاؤنٹی عدالت نے ندیم نصرت، ان کی اہلیہ اور سی ای سی کے سابق رکن واسع جلیل کو سرعام قتل کی دھمکی والے ٹوئٹ پر قیصر علی کو مجرم قرار دیا۔ندیم نصرت اور واسع جلیل نے تقریبا ایک سال قبل ایم کیو ایم لندن سے علیحدگی اختیار کرلی تھی۔ ندیم نصرت لندن میں وائس أف کراچی اور جنوبی ایشیا اقلیت الائس فاؤنڈیشن چلارہے ہیں۔امریکا میں ایم کیو ایم کے باوثوق ذرائع کے مطابق قیصر علی عدالت کی طرف سے ٹرائل پر ہیں۔باوثوق ذرائع کی خبر کے مطابق قیصر علی کو ٹرائل کے دوران اچھا رویہ دکھانا ہوگا، ایسا نہ کرنے کی صورت میں انہیں فوری گرفتار اور قید ہو جائے گی۔عدالت نے واسع جلیل، ندیم نصرت اور ان کے اہلخانہ کے حق میں 2 سال کے لیے پروٹیکشن آرڈر جاری کیا ہے۔ جس کے تحت قیصر علی کو ندیم نصرت، ان کی بیوی اور واسع جلیل یا ان کے اہلخانہ کے قریب جانے یا ملنے سے روک دیا گیا ہے۔عدالت نے ایم کیو ایم کے بالٹی مور کے انچارج کو اسلحہ اور اس کے لائسنس ضبط کرانے کے احکامات بھی دئیے۔ ایم کیو ایم کے انچارج مستقبل میں کوئی اسلحہ نہیں خرید سکیں گے۔