بلدیہ ٹائون نے ڈاکوئوں کے ’’چھلاوہ‘‘ گروپ نے ہلچل مچادی

July 20, 2019 12:43 pm0 commentsViews: 15

کباڑی چوک بلدیہ نمبر 9 میں ڈکیت گروپ دن دہاڑے گھروں اور دکانوں میں یومیہ کی بنیاد پر وارداتیں کررہا ہے
سرسید ٹائون میں بھی لوٹ مار کی وارداتوں میں اضافہ، جمعہ کی نماز سے قبل الیون سی میں گھر کا صفایا کردیا گیا
کراچی (کرائم ڈیسک) کراچی کے علاقے بلدیہ ٹائون میں ’’چھلاوہ‘‘ ڈاکوئوں کے گروپ نے ہلچل مچا دی، چار رکنی ڈکیت گروپ بلدیہ نمبر9 کباڑی چوک کے قریب دن دہاڑے دکانوں میں لوٹ مار کرکے فرار ہو جاتا ہے۔ علاقہ مکینوں نے بتایا کہ لوٹ مار کی وارداتیں یومیہ بنیادوں پر ہو رہی ہیں، ڈاکوئوں کا گروپ دوپہر دو بجے سے چار بجے کے درمیان علاقے میں آتا ہے اور لوٹ مار کرکے فرار ہو جاتا ہے، شکایات کے باوجود پولیس نے تاحال اس ڈکیت گروپ کی گرفتاری کے لیے کوئی ایکشن نہیں لیا ہے جس پر علاقہ مکینوں اور دکانداروں میں شدید اشتعال پایا جاتا ہے۔ دوسری طرف سرسید ٹائون میں بھی اسٹریٹ کرائم کے ساتھ ساتھ گھروں میں ڈکیتی کی وارداتوں نے بھی مکینوں کو خوفزدہ کر دیا، سرسید ٹائون کی ہر گلی میں لوٹ مار کی واردات ہو چکی۔ علاقے سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق سرسید ٹائون کے علاقے سیکٹر الیون سی ٹو میں واقع مکان میں جمعہ کی نماز سے قبل 3 ڈاکوئوں نے داخل ہوکر اہل خانہ کو یرغمال بنا کر پورے گھر کی تلاشی کے دوران بھاری مالیت کے طلائی زیورات، نقدی اور دیگر سامان لوٹ کر فرار ہوگئے۔ ہیڈ محرر عطااللہ نے بتایا کہ پولیس نے ڈکیتی کی واردات کا مقدمہ مدعی عمران کی مدعیت میں درج کر لیا ہے جس میں انہوں نے بتایا کہ ڈاکو واردات کے دوران ایک لاکھ 90 ہزار روپے، 6 سیٹ طلائی زیورات، بالیاں اور دیگر سامان لوٹ کر فرار ہوئے ہیں، عطااللہ نے مزید بتایا کہ ڈاکوئوں کا چوتھا ساتھی گھر کے باہر تھا اور اطلاع ہے کہ وہ کار میں سوار تھا۔