ڈینگی بخار ایک اور زندگی نگل گیا ، رواں سال اموات 7 ہو گئیں 1478 متاثر

September 4, 2019 11:30 am0 commentsViews: 3

لسبیلہ کا رہائشی دوران علاج جناح اسپتال میں دم توڑگیا، اندرون سندھ بھی 69افراد وائرس کا شکار
ضلعی انتظامیہ مچھروں کی افزائش روکنے میں ناکام، جراثیم کش ادویات کاچھڑکائو نہیں کیا‘ڈاکٹر سیمی جمالی
کراچی (اسٹاف رپورٹر)کراچی میں ڈینگی بخار سے ایک اور نوجوان جاں بحق ہوگیا، رواں سال اموات کی تعداد 7ہوگئی ہے۔ جناح اسپتال کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر سیمی جمالی کے مطابق پٹیل پاڑہ لسبیلہ کے رہائشی 22سالہ نوجوان اکبرجمن کوڈینگی بخارکی شکایت پراسپتال لایاگیا لیکن وہ دوران علاج دم توڑ گیا۔ ڈینگی کنٹرول پروگرام کے منیجر ڈاکٹراقبال محمودکے مطابق رواں سال کراچی میں ڈینگی سے 1478اور دہی سندھ میں 69افراد متاثر ہوئے جبکہ مجموعی تعداد 1547ہوگئی ہے اور جاں بحق افرادکی تعداد 7تک پہنچ گئی ہے۔ شہر میں گندگی اور غلاظت کے ڈھیروں اور سیوریج نظام خراب ہونے کے سبب ڈینگی مچھروں کی افزائش میں غیر معمولی اضافہ ہوگیا ہے۔ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے مچھروں کی افزائش روکنے کے لئے کسی قسم کے اقدامات نہیں کئے جارہے ہیں۔ شہر میں غلاظت اور گندگی کے جگہ جگہ ڈھیر لگنے کے باعث مچھر مکھیوں کی بھرمار ہوچکی ہے۔ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے مچھر مار ادویات کا چھڑکاؤ نہیں کیا جاسکا ہے جبکہ مچھروں کی بھرمار ہوجانے کے باعث لوگ بخار میں مبتلا ہوکر اسپتالوں میں داخل ہورہے ہیں۔ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے فنڈز کی عدم فراہمی کا رونا رویا جارہا ہے۔