تاجر کسی صورت ٹیکس کیخلاف نہیں ہیں حبیب شیخ

September 14, 2019 12:15 pm0 commentsViews: 4

سالانہ 15 کروڑ کی سیل کرنے والے تاجروں کیلئے آسان اور سادہ اسکیم لائی جائے
کراچی ( اسٹاف ر پورٹر ) تنظیم تاجران پاکستان کے سینئر وائس چیئرمین اور کراچی سندھ تاجر اتحاد کے چیئرمین شیخ حبیب نے کہا ہے کہ سالانہ15کروڑروپے تک کا ٹرن اوور کرنے والے تاجروںکو فکس ٹیکس میں شامل کیا جائے، ہم کسی صورت میں ٹیکس کے خلاف نہیں ہیں ، ہمارا ہدف ایف بی آر سے مذاکرات کرکے تاجروں کے لیے کوئی قابل عمل و باعزت راستہ نکالنا ہے، جس سے تاجر کے لیے ٹیکس دینا آسان ہوجائے اور حکومتی آمدن میں اضافہ ممکن ہو سکے اور ٹیکس کے دائرے کار میں بھی اضافہ ہو۔ گزشتہ روز اپنے ایک جاری کردہ بیان میںشیخ حبیب نے کہا کہ سالانہ 15 کروڑ روپے سیل تک کے تاجروں کے لیے سادہ و آسان ٹیکس اسکیم لائی جائے، یہ ٹیکس آسان و سادہ اردو کے فارم کے زریعے تاجر خود بینک میں جمع کرا سکیں اوراس تاجر سے6 برس کا آڈٹ نہ ہو جب کہ سادہ فارم کے ذریعے خاص حد تک کی ویلتھ اسٹیٹمنٹ جمع کرانے پر کوئی جرمانہ نہ لگایا جائے۔ شیخ حبیب کا مزید کہنا تھا کہ تاجر برادری حکومت سے ہر قسم کا تعاون کرنے کے لیے تیار ہے اور تمام تاجر ٹیکس دینا چاہتے ہیں لیکن ایف بی آر کی جانب سے بنائی جانے والی مشکل پالیسیوں سے خوفزدہ ہیں، انہیں خوف کی فضا سے باہر نکالنے کے لیے کم سے کم3برس تک اس سادہ ٹیکس نظام کے ذریعے ٹیکس وصول کیا جائے اور انہیں ٹیکس کے حوالے سے آگاہی فراہم کی جائے تاکہ تاجر برادری خوشی سے ٹیکس کی ادائیگی کرے ۔