بجٹ کے نفاذ کے بعد ملک بھر کی معیشت کا پہیہ جام

September 17, 2019 11:41 am0 commentsViews: 2

وزیر خزانہ کی معیشت کی بہتری، ٹیکسوں کی وصولی اور ایکسپورٹ میں اضافے کے دعوے مضحکہ خیز قرار
آئی ایم ایف کے جائز ناجائز مطالبات کے آگے سرتسلیم خم کرنے کے نتیجے میں ملک تباہی کے دھانے پر پہنچ گیا
کراچی( کامرس رپورٹر)آل پاکستان آرگنائزیشن آف اسمال ٹریڈرز اینڈ کاٹیج انڈسٹریر کے صدر محمود حامدنے وزیر خزانہ کی جانب سے معیشت کی بہتری، ٹیکسوں کی وصولی اور ایکسپورٹ میں اضافے کے دعوے کو مضحکہ خیز قرار دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بجٹ 2019-20کے نفاذ کے بعد پورے ملک کی معیشت کا پہیہ جام ہوچکا ہے۔ IMFکے جائز اور ناجائز مطالبات کے آگے سر تسلیم خم کرنے کے نتیجے میں ملکی معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ گئی ہے۔ تاجر احتجاج اور 13جولائی کی ملک گیر ہرٹال کے بعد حکومت نے تاجروں سے مذاکرات کا آغاز کیا مگر وہ کسی نتیجے پر نہ پہنچ سکے۔ حکومت نے چھوٹے تاجروں کے لیے فکسڈ ٹیکس کے نفاذ کا وعدہ کیا تھا مگر اس پر بھی تاجر تجاویز قبول نہیں کی گئیں اور معاشی بحران شدید سے شدید تر ہو تا جا رہا ہے۔