مقبوضہ کشمیر پر ٹرمپ کی ثالثی قبول نہیں کریں گے ‘سراج الحق

September 17, 2019 12:14 pm0 commentsViews: 3

اقوام متحدہ کشمیریوں کے حق میں فیصلہ کرے کہ وہ کس کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں
حجاب کی مہم جہاد،کشمیر میں ایک طرف کربلا،ادھرمسلم ممالک خاموش‘خطاب
لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک )امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے حجاب کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم ٹرمپ کی ثالثی قبول نہیں کریں گے ، حجاب کی مہم ایک جہاد ہے کشمیر کی خواتین بھارتی فوج کا ڈ ٹ کر مقابلہ کررہی ہیں، ایک طرف کربلاکا سماں ہے اور دوسری طرف مسلم ممالک خاموش ہیں۔ہم ٹرمپ کی ثالثی قبول نہیں کریں گے ، اقوام متحدہ کشمیریوں کے حق میں فیصلہ کرے کہ وہ کس کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں، مقبوضہ کشمیر میں 42 دن کا کرفیو گزر گیا لیکن اب بھی وزیراعظم نے سیاسی جماعتوں کو اجلاس کیلئے نہیں بلایا، کشمیر کیلئے ایک بھی اجلاس اپوزیشن کیساتھ ملکر نہیں بلایا گیا،آج بھی خواتین سوتی ہیں تو یہ سوچ کر اٹھتی ہیں کہ شاید آج کشمیر کیلئے پاکستان ایل او سی کی طرف نکلے گا۔ آج مسلم ممالک میں مندر بن رہے ہیں اور دوسری طرف 70 سے 80 لاکھ مسلمان اپنے حق کی جنگ لڑ رہے ہیں،ہمارامطالبہ 370 کی بحالی نہیں بلکہ ہمارا مطالبہ ہے کہ اقوام متحدہ فیصلہ کرے کہ کشمیر کس کے ساتھ رہنا چاہتا ہے۔ موجودہ حکومت ایک ناکام حکومت ثابت ہو ئی ہے ، کو ئی خارجہ پالیسی نہیں رہی، او آ ئی سی کے اجلاس میں بھارت کا وزیر خارجہ کرسی پر اور ہمارا زمین پر بیٹھا ہے۔ سراج الحق نے کشمیر سے اظہار یکجہتی کیلئے 6 اکتوبر کو لاہور میں عوامی مارچ کا اعلان کرتے ہوئے کہا مختلف شہروں میں بھی عوامی مارچ کئے جائیں گے۔