مقبوضہ کشمیر : شہری 44ویں روز بھی کرفیو کے سامنے ڈٹے ہوئے ہیں

September 17, 2019 1:21 pm0 commentsViews: 6

یورپی پارلیمنٹ میں آج مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی افواج کے مظالم، کریک ڈاؤن اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر بحث کی جائے گی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق کشمیری 44ویں روز بھی مقبوضہ کشمیر میں کرفیو اور پابندی کے سامنے ڈٹے ہوئے ہیں۔ دوسری جانب یورپی پارلیمنٹ میں آج مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی افواج کے مظالم ،کریک ڈاؤن اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر بحث کی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق یورپی یونین کی خارجہ امور کی سربراہ مقبوضہ کشمیر پر یورپی یونین کی پالیسی پر تقریر کریں گی۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز بھارتی چیف جسٹس نے مقبوضہ کشمیر سے متعلق مودی حکومت کے متنازع اقدامات کے خلاف درخواستوں کی سماعت کے دوران کہا تھا کہ قومی سلامتی کو مدِنظر رکھتے ہوئے ترجیحی بنیادوں پر معمولات زندگی بحال کیے جائیں۔

بھارتی حکومت نے عدالت میں مؤقف اختیار کیا تھا کہ کشمیر میں پابندیوں کے دوران ایک گولی بھی نہیں چلی، نہ کوئی جانی نقصان ہوا ہے، اٹارنی جنرل نے دعویٰ کیا کہ 88 فیصد پولیس اسٹیشنز سے پابندیاں اٹھالی گئی ہیں، عدالت نے اٹارنی جنرل سے حلف نامہ مانگ لیا۔