تین ہٹی سے گارڈن تک پتھارے، چبوترے اور غیر قانونی دکانیں مسمار

October 9, 2019 11:50 am0 commentsViews: 9

قابضین کی جانب سے سخت مزاحمت، پولیس نے بروقت مداخلت کرکے 4 افراد کو گرفتار کرلیا، بلدیہ عظمیٰ نے تجاوزات کیخلاف مہم تیز کردی ہے، ڈپٹی ڈائریکٹر ضلع شرقی
کے ایم سی جنوبی نے چڑیا گھر کے قریب مسمار کی گئی دکانوں پر دوبارہ تعمیرات کی کوشش کو ناکام بنادیا ، رفاعی ادارے کے کیمپ بھی ہٹادیئے گئے
کراچی (اسٹاف رپورٹر) بلدیہ عظمیٰ کراچی نے ایک بار پھر تجاوزات کے خلاف مہم تیز کردی، تین ہٹی سے گارڈن تک لگے پتھارے اور چبوترے و غیر قانونی دکانیں مسمار کردی گئیں اس دوران قابضین کی جانب سے سخت مزاحمت کی گئی۔ پولیس نے بروقت مداخلت کرکے 4 افراد کو گرفتار کرلیا، گزشتہ روز کراچی کے ضلع شرقی میں ڈپٹی ڈائریکٹر امین لاکھانی کی نگرانی میں تین ہٹی اور لسبیلہ میں کارروائی کی گئی، کارروائی کا آغاز تین ہٹی سے کیا گیا جہاں نوری شاہ بابا مزار کے قریب تعمیر ہونے والی 6دکانیں مسمار کی گئیں جبکہ تین ہٹی چوک میں لگے متعدد پتھارے بھی ہٹا دیے گئے۔ یہاں کارروائی کے دوران بعض افراد نے مزاحمت کی اس دوران پولیس نے دو افراد کو گرفتار کرلیا، کے ایم سی کی ٹیم نے فلمستان سنیما سے لسبیلہ چوک تک فٹ پاتھ پر لگے کیبن اور چبوترے مسمار کیے لسبیلہ سے بھی دو افراد کو مزاحمت کرنے پر قابو کرلیا گیا، کے ایم سی جنوبی کی ٹیم نے گارڈن زو کے قریب مسمار کی گئی دکانوں پر دوبارہ تعمیرات کی کوشش کو ناکام بنا دیا یہاں ایک رفاہی ادارے کے کیمپ بھی ہٹا دیے گئے۔