وزیر اعظم عمران خان کا بڑا اعلان بڑے شہروں میں کثیر المنزلہ عمارتیں بنانے کی منظوری

January 15, 2020 12:17 pm0 commentsViews: 9

ایم کیو ایم ہماری اہم اتحادی ہے اس کے تحفظات دور کریں گے، خالد مقبول کو بھی کابینہ میں واپس لائیں گے، کابینہ سے خطاب
وزیر اعظم نے ایک لاکھ 29 ہزار ملازمتوں کیلئے 60 دن میں قواعد بنانے کی ہدایت کردی
اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے ملک کے بڑے شہروں میں کثیرالمنزلہ عمارتیں بنانے کی منظوری دے دی، انہوں نے کہاکہ یہ معاشی ترقی کا سال ہے، کابینہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ایم کیو ایم حکومت کی اہم اتحادی ہے، خالد مقبول صدیقی کو کابینہ میں واپس لائیں گے۔ حکومت اتحادی جماعتوں کے تمام تحفظات کو دور کرے گی اور انہیں ہمیشہ ساتھ لے کر چلے گی۔ وفاقی کابینہ کے اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا اتحادی جماعتوں نے ہر مشکل وقت میں حکومت کا ساتھ دیا ان کے تحفظات ختم کرنے کے لیے حکومتی کمیٹی بنائی ہے۔ وزیراعظم نے کہاکہ حکومتی نظام کو لگی دیمک صاف کر رہے ہیں، اتحادیوں کے تمام مطالبات پر پیشرفت ہو رہی ہے، اجلاس میں 16 نکاتی ایجنڈے پر غور کے علاوہ امریکا ایران کشیدگی، عالمی حالات اور ملک کی سیاسی و معاشی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ وفاقی کابینہ نے 2020ء کو روزگار کا سال قرار دیتے ہوئے مختلف وزارتوں اور ڈویژنوں میں ایک لاکھ 29 ہزار خالی اسامیوں پر بھرتی کے لیے آئندہ 60 دنوں میں قواعد مکمل کرنے کی منظوری دی، وفاقی ملازمتوں میں فاٹا اور گلگت بلتستان کے چار فیصد کوٹے کو علیحدہ کرنے، وزارت قومی صحت و خدمات کا نام تبدیل کرکے وزارت صحت و آبادی رکھنے، پاکستان اور سعودی عرب کے مابین ترمیم شدہ ایئرسروسز کے معاہدے، ریئر ایڈ مرل ذکاالرحمن کو ڈائریکٹر جنرل پاکستان میری ٹائم سیکورٹی ایجنسی، بریگیڈیئر ضیا عابد باجوہ کو ہیوی انڈسٹریز ٹیکسلا میں ممبر پروڈکشن اور سردار عبدالمجید خان کو وفاقی محتسب سیکریٹریٹ ریجنل آفس کراچی میں بطور ممبر مقرر کرنے کی بھی منظوری دی گئی۔ فاٹا کو تین فیصد جبکہ گلگت بلتستان کو ایک فیصد کوٹہ ملے گا۔ وزیراعظم نے مختلف وزارتوں اور ڈویژنوں میں قواعد و ضوابط بنانے کے زیرالتوا ایک لاکھ 6 ہزار 343 کیسز اور 3 ہزار گاڑیوں سمیت تین کروڑ 70 لاکھ اشیا کو ناقابل استعمال قرار دینے کے باوجود تلف نہ کرنے کا نوٹس لیتے ہوئے 60 دنوں میں جامع حکمت عملی مرتب کرنے کی ہدایت دے دی۔ انہوں نے انصاف صحت کارڈ پروگرام تک نادار لوگوں کی رسائی کے لیے تمام رکاوٹیں دور کرنے کی ہدایت دی۔