کراچی میں لاک ڈائون کی خلاف ورزی پر 119 افراد گرفتار

March 24, 2020 2:16 pm0 commentsViews: 23

رسالہ کے علاقے سے چار افراد کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کرلیا، دیگر علاقوں سے بھی گرفتاریاں عمل میں آگئیں
حکومت کی جانب سے میڈیا ورکرز کو مستثنیٰ قرار دیئے جانے کے باوجود نیو ٹائون پولیس نے کیمرہ مین کو حراست میں لے لیا
کراچی (کرائم رپورٹر) کراچی کے مختلف علاقوں میں پولیس نے لاک ڈائون کی خلاف ورزی اور بلاضرورت گھر سے نکلنے والے 119 افراد کو گرفتار کرکے تھانے منتقل کردیا، گرفتار کیے جانے والوں میں نجی ٹی وی کا کیمرہ مین بھی شامل ہے، 29 مقدمات بھی درج کر لیے گئے۔ گرفتاریاں کورنگی، نارتھ ناظم آباد، سول لائن اور دیگر علاقوں سے عمل میں آئیں۔ تھانہ رسالہ نے کارروائی کرتے ہوئے پان پتی سے وابستہ چار افراد محمد اسلم ولد محمد ظہیر، نوید احمد ولد اللہ ڈنو، محمد ہاشم ولد محمد جمن اور ایان احمد ولد محمد اعجاز کو گرفتارکیاجن کے خلاف مقدمہ الزام نمبر 128/2020 جرم دفعہ 188 ت پ درج رجسٹر کیا گیا ، پولیس اور رینجرز کی جانب سے صحافیوں اور کیمرہ مینوں کو بھی گرفتار کیا جارہا ہے۔ سندھ حکومت کی طرف سے صحافیوں کو اجازت ملنے کے باوجود نیو ٹاؤن تھانے کے پولیس اہلکاروں نے سندھ ٹی وی کے کیمرامین کو گرفتا کر لیا۔سندھ ٹی وی کے کیمرامین کامران اپنی ڈیوٹی کرکے واپس گھر جا رہا تھا کہ پولیس نے حراست میں لے لیا۔سندھ ٹی وی کے کیمرامین کی طرف سے اپنا تعارف کرانے کے باوجود میڈیا کارڈ سمیت پورا پرس لے کر لاک اپ کر دیا۔ علاوہ ازیں کراچی میں لاک ڈائون پر موثر طور پرعملدرآمد کرانے کے سلسلے میںمحکمہ داخلہ سندھ کی ہدایات پر کمشنر کراچی افتخار شالوانی نے نوٹیفکیشن جاری کر دیا ۔ نوٹیفکیشن کے مطابق تمام ریسٹورنٹس بند ہوں گے اور ہوم ڈلیوری یا لے جانے کی اجازت نہیں ہو گی، تاہم تمام کھانے پینے کی اشیا کے ریٹیلرز کو اشیا فروخت کرنے کی اجازت ہو گی۔اسپتال جانے کے لیے مریض کے ساتھ صرف ایک شخص کو جانے کی اجازت ہو گی، نوٹیفکیشن کے مطابق گھر کے ایک فرد کو قومی شناختی کارڈ دکھا کر 48 گھنٹے میں ایک بار کھانے پینے کی اشیا خرید نے کی اجازت ہو گی۔ تمام پبلک ٹرانسپورٹ بس، ٹیکسی، رکشہ، کریم، اوبر ایس ڈبلیو وی ایل ائرلفٹ پر پابندی ہوگی نجی گاڑیوں میں پیٹرول پمپ کو 10 لیٹر سے زائد پیٹرول گاڑی میں بھرنے کی اجازت نہیں ہوگی، موبائل فونز کی تمام مر مت کرنے والی دکانیں اور فرنچائز کی دکانیں بند رہیں گی تمام گروسری کی دکانوں یا دیگر سہولت مراکز پر ایزی لوڈ کی سہولت حاصل ہو سکے گی۔ بنکوں کے سیکورٹی گارڈز اور سفارتی عملہ کے پرائیویٹ گارڈز کے لیے لازمی ہوگا کہ وہ یونیفارم میں ہوں اور قومی اور دفتر کا شناختی کارڈ رکھیں نوٹی فیکشن تمام ڈپٹی کمشنرز اسسٹنٹ کمشنرز اور مختار کاروں کے دفاتر چوبیس گھنٹے کھلے رہیں گے۔