آل پارٹیز کانفرنس نے کوروناوائرس تیسری عالمی جنگ قرار دیدیا

March 25, 2020 12:03 pm0 commentsViews: 2

اے پی سی کا مقصد ملکرکورونا وائرس کے چیلنج سے نمٹنا ہے، اس کیلئے متفقہ پالیسی بنانے کی ضرورت ہے، بلاول بھٹو
وفاقی حکومت آفت پر قابو پانے میں سندھ حکومت کو مناسب معاونت فراہم نہیں کررہی‘شہباز شریف ودیگر کا خطاب
کراچی (اسٹاف رپورٹر) پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئر مین بلاول بھٹو زر داری نے کہا ہے کہ اے پی سی کا مقصد ملکر کرونا وائرس کے چیلنج سے نمٹنا ہے، کرونا وائرس سے نمٹنے کیلئے متفقہ پالیسی بنانے کی ضرورت ہے۔ منگل کو پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی دعوت پر بلائی گئی آل پارٹیز کانفرنس سے اظہار خیال کرتے ہوئے بلاول بھٹو زر داری نے کہاکہ آل پارٹیز کانفرنس کا مقصد ملکر کرونا وائرس کے چیلنج سے نمٹنا ہے، کرونا وائرس سے نمٹنے کیلئے متفقہ پالیسی بنانے کی ضرورت ہے۔ انہوںنے کہاکہ قومی سطح پر ملکر کر کام کرنے کی ضرورت ہے تاکہ اس وباء سے نمٹا جاسکے۔ وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ اور ڈاکٹر باری نے اے پی سی کے شرکاء کو بریفنگ دی۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر اور اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے کرونا وائرس کی تیسری عالمی جنگ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ وفاقی حکومت آفت پر قابو پانے میں سندھ حکومت کو مناسب معاونت فراہم نہیں کررہی جو نہایت افسوسناک امر ہے،حکومتی رویہ قوم پر ظلم کرنے اور گناہ عظیم کے مترادف ہے، خدارا اپنے ذہن اور دل کو سیاسی کدورتوں سے پاک کریں،قوم زندہ رہے گی، ہم سب زندہ رہیں گے اور یہ ملک ہوگا تو سیاست بھی ہوگی،وقت تیزی سے گزر رہا ہے، مزید وقت ضائع نہ کیاجائے اور عملی اقدامات شروع کئے جائیں، سراج الحق نے کہاکہ حکومت کو کرونا وائرس پر نیشنل ایکشن پلان کے طرز پرتمام جماعتوں کے ساتھ ملکر ایک قومی پالیسی بنانا چاہیے تھی۔میر حاصل بزنجو نے کہاکہ تفتان واقعہ کو قومی جرم قرار دیتا ہوں۔ اختر مینگل نے کہاکہ بلوچستان میں جو سینٹر قائم کئے گئے وہ کرنٹائن سینٹر نہیں کوئی مہاجرین کی بستی لگ رہی تھی۔ خالد مقبول صدیقی نے کہاکہ کرونا وائرس کا مقابلہ سیلف آئسولیشن اور لاک ڈاؤن ہی ہے، تمام سیاسی و علاقائی مفادات سے ہٹ کر ہمیں لڑنا ہوگا۔ فیصل سبزواری نے کہاکہ مذہبی جماعتوں کے ساتھ ملکر مساجد میں اجتماعات کو روکنے کیلئے مدد لی جائے۔