کورونا وائرس سے نجات کیلئے رات 10 بجے ملک بھر کی مساجد اور گھروں کی چھتوں پر اذانیں دی جانے لگیں

March 25, 2020 12:11 pm0 commentsViews: 1

علمائے کرام سے مشاورت کے بعد اذانیں دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے
جب تک کورونا ختم نہیں ہوتا روز اذانیں دی جائیں گی
کراچی (اسٹاف رپورٹر) کراچی سمیت ملک کے مختلف شہروں، دیہاتوں، قصبوں اور گوٹھوں میں منگل کی شب 10 بجے کے قریب مختلف مساجد اور گھروں کی چھتوں پر سے اذانیں دی گئیں اور دعا کی گئی کہ اللہ تعالیٰ رحم کرے اور اس کورونا وائرس کو ختم فرمائے۔ بتایا گیا ہے کہ یہ اقدام علما کرام کی مشاورت سے اٹھایا گیا۔ علما کرام کی مشاورت سے یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ رات ٹھیک 10 بجے پورے پاکستان میں مساجد کے ساتھ ساتھ ہر گھر سے ایک فرد اپنے گھر کی چھت پر باوضو اور قبلہ رُخ ہو کر اذان دے گا۔ جبکہ اذان کے ساتھ ساتھ لوگوں سے گھروں میں رہنے کی اپیل بھی کی گئی۔ دریں اثناء جماعت اہلسنّت پاکستان کراچی کے امیر علامہ شاہ عبدالحق قادری، مولانا ابرار احمد رحمانی، ڈاکٹر سید عبدالوہاب قادری، علامہ سید عبدالقادر شاہ شیرازی، علامہ خلیل الرحمن چشتی، علامہ نسیم احمد صدیقی، علامہ کامران قادری، مولانا الطاف قادری، مفتی عبدالحق سیفی، علامہ رئیس قادری، مفتی ناصر خان ترابی، سید رفیق شاہ، مفتی بلال قادری، علامہ اکرام المصطفیٰ، ڈاکٹر فرید الدین قادری نے مشترکہ بیان میں کہاکہ جان لیوا کورونا وائرس سے نجات اور حفاظت کے لیے روزانہ رات 10 بجے مساجد، گھروں کی چھتوں اور بالکنی سے اذانیں دی جائیں۔ احتیاطی تدابیر کے ساتھ ساتھ رب کو راضی کرنے والے اعمال صالح کلمہ طیبہ، درود شریف، استغفار کا ورد بھی کیا جائے۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان سمیت دنیا کو اس وقت وبائی مرض کی صورت میں شدید چیلنج درپیش ہے، حکومت اس وبا سے تنہا مقابلہ نہیں کرسکتی، موذی وبا سے بچائو کے لیے حکومت کی جانب سے بتائی جانے والی احتیاطی تدابیر پر عمل کیا جائے عوام بلاضرورت گھر سے باہر نہ نکلیں۔