پاکستانی عوام نے سعودی عرب کو بہترین دوست قرار دیدیا

August 26, 2015 4:54 pm0 commentsViews: 17

مسئلہ کشمیر اور جنگوں کے دوران سعودی عرب نے ہماری مدد کی،85فیصد کی رائے
حرمین شریفین کے دفاع کے لیے پاک فوج کو سعودی عرب جاناچاہیے، 45فیصد کا موقف
لاہور( این این آئی) پاکستانی عوام کی بھاری اکثریت نے سعودی عرب کو بہترین مدد گار قرار دیدیا، ایک تازہ سروے کے مطابق 80 فیصد شہریوں کا کہنا ہے کہ پاکستان پر مشکل وقت میں سعودی عرب سب سے زیادہ کام آیا۔ حرمین شریفین کے دفاع کیلئے پاکستانی فوج کو جانا چاہئے یا نہیں۔ اس سوال پر45 فیصد نے کہا ہاں، 30 فیصد نے کہا نہیں۔ 15 فیصد نے کہا کہ اگر مقدس مقامات کو خطرہ ہو تو جانا چاہئے۔ 10 فیصد نے کہا کہ فوجی قیادت کو فیصلہ کرنا چاہئے۔علم و امن فائونڈیشن نے چاروں صوبوں، گلگت بلتستان اور آزاد کشمیر کے عوام سے پاک سعودی اور پاک ایران تعلقات کے بارے میں سروے میں پوچھا کہ مشکل وقت میں سعودی عرب نے پاکستان کی زیادہ مدد کی یا ایران نے۔ اس کے جواب میں80 فیصد افراد نے کہا کہ سعودی عرب جب کہ صرف7 فیصد نے کہا ایران۔ 13 فیصد نے کہا کہ معلوم نہیں،۔ جنگوں کے دوران سعودی عرب نے پاکستان سے تعاون کیا یا ایران نے۔ اس کے جواب میں85 فیصد نے سعودی عرب3 فیصد نے ایران اور12 فیصد نے کہا معلوم نہیں۔ مسئلہ کشمیر پر سعودی عرب نے پاکستان کے موقف کی تائید کی یا ایران نے۔ 70 فیصد نے سعودی عرب، 25 فیصد نے اور ایران، 5 فیصد نے کہا معلوم نہیں۔ پاکستان کے دفاع کو مضبوط بنانے کے لئے سعودی عرب نے زیادہ تعاون کیا یا ایران نے۔ اس کے جواب میں 80 فیصد نے کہا کہ سعودی عرب، 10 فیصد نے کہا ایران، 5 فیصد نے لیبیا، جب کہ5 فیصد نے کہا معلوم نہیں۔ پاکستان کو معاشی و اقتصادی طور پر مضبوط بنانے کیلئے سعودی عرب نے زیادہ تعاون کیا یا ایران نے۔ 65 فیصد کا جواب تھا سعودی عرب۔

Tags: