وفاقی وزراء اور اہم شخصیات پر دہشت گرد حملوں کا خطرہ

October 3, 2015 2:37 pm0 commentsViews: 12

دہشت گرد کابینہ کے وزراء اور ملک کی اہم شخصیات کو نشانہ بنانا چاہتے ہیں، انٹیلی جنس اداروں کی وزارت داخلہ کو رپورٹ
اطلاعات کے بعد دفاع اور خزانے کے وزراء سمیت دیگر وزیروں کی سیکورٹی سخت کرنے کی ہدایت
اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک ) حکومتی اداروں کو نشانہ بنانے والے ملک دشمن دہشت گردوں نے ایک بار پھر وفاقی وزراء اور سیاست دانوں کو نشانہ بنانے کا منصوبہ تیار کیا ہے۔ انٹیلی جنس اداروں کی جانب سے معلومات حاصل ہونے کے بعد وفاقی وزراء کی سیکورٹی بڑھا کر ان کی نقل و حرکت محدود کر دی گئی ہے۔ انٹیلی جنس اداروں کی رپورٹ کے مطابق چوہدری نثار، خواجہ آصف اور اسحاق ڈار دہشت کے نشانہ پر ہیں جو اس وقت وفاقی حکومت میں سب سے زیادہ فعال کر دار ادا کر رہے ہیں۔انٹیلی جنس اداروں نے وزارت داخلہ کو وفاقی کابینہ کے ارکان کو لاحق خطرات سے آگاہ کیا۔ انٹیلی جنس اداروں کی جانب سے وزارت داخلہ کو ارسال کی گئی رپورٹوں میں بتایا گیا کہ دہشتگرد وفاقی کابینہ کے اہم وزراء اور ملک کی اہم سیاسی شخصیات کو نشانہ بنا نا چاہتے ہیں۔ وزارت داخلہ نے انٹیلی جنس اداروں کی رپورٹ کی روشنی میں وزیر داخلہ، وزیر خزانہ، وزیر دفاع سمیت دیگر وزراء کی سیکورٹی مزید سخت کرنے کی ہدایت کر دی۔ اس کے علاوہ وفاقی وزراء کو نقل و حرکت کے دوران محتاط رہنے کی بھی ہدایت کر دی گئی ۔ سیکورٹی خدشات کے باعث وفاقی وزراء نے بلٹ پروف گاڑیوں کا استعمال شروع کر دیا ہے جبکہ غیر ضروری میٹنگز اور اجلاسوں میں شرکت کرنے سے بھی گریز شروع کر دیا ہے۔ ذرائع کے مطابق پنجاب میں بھی اہم حکومتی شخصیت دہشت گردوں کے نشانے پر ہے۔ جس کی سیکورٹی بڑھا دی گئی ہے۔

Tags: