کراچی سے اسٹریٹ کرائمز کے خاتمے کا حکم…!

December 26, 2019 2:04 pm0 commentsViews: 36

سندھ حکومت کو آخر کار کراچی میں بڑھتے ہوئے اسٹریٹ کرائمز ختم کرنے کا خیال آہی گیا۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے پولیس کے سربراہ کو حکم دیا ہے کہ خواہ کچھ کریں۔ کراچی کو اسٹریٹ کرائمز سے پاک ہونا چاہئے۔ منگل کو صوبائی کابینہ کے اجلاس میں انہوں نے ایڈیشنل آئی جی غلام نبی میمن کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ میں نہیں جانتا آپ کو کیا کرناہے۔ سمری کورٹ بنائیں یا کوئی اور اقدام کریں کراچی اسٹریٹ کرائم سے پاک ہونا چاہئے اور پولیس پر عوام کا اعتماد بھی بحال ہونا چاہئے۔ یہ دوسرا کام بہت مشکل بلکہ نا ممکن ہے کیوں کہ پولیس نے یہ بے اعتمادی کئی عشروں کی محنت سے پیدا کی ہے۔ بہر حال وزیراعلیٰ سندھ کی کراچی میں بڑھتی ہوئی وارداتوںپر تشویش ہی خوش آئند ہے۔ وہ اتنا تو کرہی سکتے ہیں کہ حکم جاری کردیں۔ ایڈیشنل آئی جی غلام نبی میمن نے اجلاس کے شرکاء کو بتایا کہ کراچی میں اسٹریٹ کرائمز پر بڑی حد تک قابو پالیا گیا ہے۔انہیں یہی کہنا چاہئے تھا لیکن روز مرہ کی صورتحال کچھ اور بتاتی ہے۔
شہر کراچی میں تو طویل عرصے سے رینجرز بھی تعینات ہے چھینا جھپٹی کی وارداتیں مسلسل بڑھتی جارہی ہیں اور یومیہ درجنوں شہریوں کولوٹا جارہا ہے پولیس اور رینجرز کو مل کر شہر سے اسٹریٹ کرائمز کے خاتمے کیلئے حکمت عملی بنانا ہوگی تاکہ شہریوں کو ان رہزنوں سے نجات مل سکے جو انہیں مختلف اشیاء اور بالخصوص موبائل فونز سے محروم کردیتے ہیں۔