رضاعابدی کے ریسٹورنٹ پر چھاپہ غیرقانونی ہے، الطاف حسین

July 25, 2015 2:50 pm0 commentsViews: 24

مہاجروں کی معاشی نسل کشی کی سازش کا حصہ ہے، نوٹس لیاجائے، چیف جسٹس اور اسپیکر قومی اسمبلی سے اپیل
قائد ایم کیو ایم کا بارشوں کے دوران کرنٹ لگنے اور دیگر واقعات میں شہریوں کی ہلاکتوں پر اظہارافسوس
کراچی( اسٹاف رپورٹر) متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطا ف حسین نے حق پرست رکن قومی اسمبلی علی رضا عابدی کے کلفٹن میں واقع ریسٹورنٹ پر رینجرز کے چھاپے اورعلی رضا عابدی کے کزن کی گرفتاری کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اسے لا قانونیت قرار دیا ہے‘ اپنے ایک بیان میں الطاف حسین نے کہا کہ علی رضا عابدی منتخب نمائندے اور انتہائی تعلیم یافتہ نوجوان ہیں جو ایم کیو ایم کیخلاف جاری رینجرز کی غیر قانونی و غیر آئینی مظالم کیخلاف قومی اسمبلی کے ساتھ ساتھ سوشل میڈیا پر بھی کھل کر آواز بلند کررہے ہیں۔ علی رضا عابدی کو رینجرز کی جانب سے ماضی میں بھی دھمکی آمیز رویے کا سامنا کرنا پڑا ہے اوررینجرز کی حالیہ کارروائی بھی علی رضا عابدی کی آواز کو دبانے کی کوشش ہے‘ یہ غیر قانونی عمل رینجرز کی جانب سے مہاجروں کی معاشی نسل کشی کی سازش کا حصہ ہے۔ الطاف حسین نے سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس سے کہا کہ رینجرز کی ان غیر قانونی کارروائیوں کا فوری نوٹس لیں‘ الطاف حسین نے اسپیکر اسمبلی سے بھی کہا کہ وہ قومی اسمبلی کے ایک منتخب رکن کے کاروبار پر رینجرز کے غیر قانونی چھاپے اور انہیں ہراساں کرنے کے واقعات کا فوری نوٹس لیں‘ دریں اثناء متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطا ف حسین نے کراچی سمیت سندھ میں شدید طوفانی بارشوں کے نتیجے میں کرنٹ لگنے اور دیگر واقعات میں متعدد شہریوں کے جاں بحق ہونے پر گہرے رنج و غم کااظہار کیا ہے۔

Tags: