بھارت میں عدالت نے 14 سالہ لڑکی کو اسقاط حمل سے روک دیا

July 25, 2015 2:52 pm0 commentsViews: 46

نئی دہلی( مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت کی ایک اعلیٰ عدالت نے ایک 14 سالہ لڑکی کو اسقاط حمل کی اجازت دینے سے انکار کردیا‘ اس لڑکی کو گجرات میں ایک ڈاکٹر نے اپنی ہوس کا نشانہ بنایا تھا‘ اس لڑکی کے والد نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا تھا کہ اس کی بیٹی ایک ڈاکٹر کے پاس جانے کے بعد حاملہ ہوئی‘ جس نے مبینہ طور پر فروری میں لڑکی کو خواب آور ادویات دینے کے بعد اس کی آبرو ریزی کی تھی‘ گجرات ہائی کورٹ کی خاتون جج ابھیلا شا کماری نے کہا کہ بچے کو اس کے جنم کیلئے قصور وار قرار نہیں دیا جاسکتا۔

Tags: