بجلی اور پانی کی بندش کیخلاف مختلف شاہراہیں احتجاجاًبلاک

July 28, 2015 3:44 pm0 commentsViews: 16

نیشنل ہائی وے سمیت شاہراہوں پر گھنٹوںبدترین ٹریفک جام‘ علاقہ مکینوں کا کے الیکٹرک اور واٹر بورڈ کیخلاف شدید احتجاج
سرجانی ٹائون‘ فیڈرل بی ایریا‘گلشن اقبال‘ سہراب گوٹھ‘ مواچھ گوٹھ سمیت پرمشتعل افراد نے ٹائر جلائے اور نعرے بازی کی گئی
کراچی( اسٹاف رپورٹر) شہر کے مختلف علاقوں میں پانی اور بجلی کی بندش پر مشتعل افراد نے نیشنل ہائی وے سمیت دیگر شاہراہوں پر ٹائر نذر آتش کر کے کے الیکٹرک اور واٹر بورڈ کے عملے کے خلاف شدید احتجاج کیا جس کے باعث بد ترین ٹریفک جام ہوگیا۔ شہری گھنٹوں ٹریفک جام میں پھنسے رہے۔ تفصیلات کے مطابق قائد آباد کے اطراف کے رہائشی افراد جن میں خواتین اور بچے بھی شامل تھے انہو ں نے نیشنل ہائی وے منزل پیٹرول پمپ کے سامنے مین روڈ پر ٹائر نذر آتش اور رکاوٹیں کھڑی کرکے بلاک کر دی جس کے باعث نیشنل ہائی وے اور اطراف کی لنک سڑکوں پر بد ترین تریفک جام ہوگیا اور گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں۔ مشتعل افراد کا کہنا تھا کہ اتوار کی شام5 بجے سے بجلی منقطع ہے جس کی وجہ سے پانی سے محروم ہوگئے ہیں۔ متعدد بار کے الیکٹرک کے دفتر میں شکایت کروانے کے باوجود بجلی بحال نہیں کی گئی۔ مشتعل افراد نے صوبائی حکومت اور کے الیکٹرک انتظامیہ کے خلاف شدید نعرے بازی اور وزیر اعظم سے اپیل کی کہ کے الیکٹرک کا انتظام رینجرز کے حوالے کر دیا جائے۔ سرجانی ٹائون کے علاقے سیکٹر7 ڈی، فیڈرل بی ایریا بلاک نمبر15، گلشن اقبال بلاک 13 ڈی، سہراب گوٹھ، ایوب گوٹھ، ماڑی پور مشرف کالونی اور مواچھ گوٹھ کے مشتعل مکینوں نے بھی اپنے اپنے علاقوں میں ٹائر نذر آتش کرکے سڑکیں بلاک کر دیں۔

Tags: