رینجرز کراچی کو معاشی طور پر تباہ کرنا چاہتی ہے، متحدہ

July 28, 2015 4:57 pm0 commentsViews: 16

کراچی میں رینجرز کی کا رروائیوں کیخلاف قومی اسمبلی کے واک آئوٹ کے بعد پارلیمنٹ کے باہر مظاہرہ بھی کیا گیا
متحدہ کے ورکرز اور ارکان پارلیمنٹ کو ہر اساں کرکے سیاسی سرگرمیوں سے روکا جا رہا ہے، فاروق ستار کا خطاب
اسلام آباد( نیوز ڈیسک) متحدہ قومی موومنٹ نے قومی اسمبلی میں کراچی میں رینجرز کے چھاپوں کیخلاف شدید احتجاج کیا اور واک آئوٹ کے بعد پارلیمنٹ کے باہر مظاہرہ بھی کیا‘ پیر کے روز حق پرست رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر فاروق ستار نے قومی اسمبلی کے اجلاس میں توجہ دلائو نوٹس میں کہا کہ کراچی میں متحدہ کے ورکرزاور ارکان پارلیمنٹ کو ہراساں کیا جارہا ہے اور انہیں سیاسی سرگرمیوں سے روکا جارہاہے‘ رینجرز کراچی کو معاشی طور پر تباہ کرنا چاہتی ہے‘علی رضا عابدی کے ریسٹورنٹ پر بھی غیر قانونی طو رپر چھاپہ مار کر سیل کردیا گیا‘ وہاں سے جرائم پیشہ افراد پکڑے گئے تو اچھی بات ہے لیکن ثبوتوں کو کس کیلئے ساتھ لے گئے تاکہ علی رضا عابدی کی زبان بندی کی جاسکے جو ایم کیو ایم کے حق میں اکثر بولتے رہتے ہیں‘ حقیقت میں ایم کیو ایم کو دیوار سے لگانے کی کوشش کی جارہی ہے جس سے بد گمانیاں اور نفرتیں شدید بڑھیں گی۔ قومی اسمبلی سے واک آئوٹ کے بعد فاروق ستار اور بیرسٹر سیف کی قیادت میں ارکان نے پارلیمنٹ ہائوس کے باہر احتجاج کیا اور نعرے لگائے‘ میڈیا سے گفتگو میں فاروق ستار نے کہا کہ ایم کیو ایم کو سرکاری اداروں کیساتھ لڑانے کی کوشش کی جارہی ہے‘ الطاف حسین کی تقریر نشر کرنے پر پابندی غیر قانونی اور غیر آئینی ہے۔

Tags: