دھابیجی پمپنگ ہائوس پر بجلی بند ہونے سے پائپ لائن پھٹ گئی

July 28, 2015 5:10 pm0 commentsViews: 31

شہر کو126 ملین گیلن پانی فراہم نہ کیا جا سکا، پائپ لائن کی مرمت جلد از جلد کی جائے، ایم ڈی واٹر بورڈ
ضلع غربی اور نارتھ کراچی کے علاوہ شہر کے اہم علاقوں میں پانی کا بحران پیدا ہو گیا
کراچی( اسٹاف رپورٹر) واٹراینڈ سیوریج بورڈ کے اعلامیے کے مطابق واٹر بورڈ کے ایم ڈی سید ہاشم رضا زیدی نے ڈی ایم ڈی ٹیکنیکل سروسز اور چیف انجینئر کو ہدایت کی کہ پھٹنے والی پائپ لائن کے مرمتی کام کو جلد از جلد مکمل کرلیا جائے ‘تاکہ پانی کی فراہمی متاثر نہ ہو‘ دھابیجی ، گھارو،پپری اور N.E.K پمپنگ ہاؤسز پر پیر کی صبح 2.50 پر کے ۔الیکٹرک نے شٹ ڈاؤن کیا جس کے نتیجہ میں چاروں پمپنگ ہاؤسز سے پانی کی فراہمی بند ہوگئی ، بجلی کے اچانک بریک ڈاؤن سے دھابیجی پر 72انچ کی مین رائزنگ لائن بیک پریشن سے پھٹ گئی اس دوران 126ملین گیلن پانی فراہم نہیں کیا جاسکا ، ایم ڈی واٹربورڈ سید ہاشم رضا زیدی نے ڈی ایم ڈی ٹیکنیکل سروسز اور چیف انجینئر بلک کو ہدایت کی ہے کہ پھٹنے والی پائپ لائن کا مرمتی کا م دن رات کیا جائے اور اس کی مرمت جلد از جلد کرلی جائے تاکہ پانی کی فراہمی متاثر نہ ہو ، کے ۔الیکٹرک نے گھارو ، پپری اور N.E.Kکی بجلی ساڑھے 3گھنٹے بعد بحال کی البتہ دھابیجی پر بجلی صبح 7:10بحال ہوئی اس دوران مجموعی طور پر126ملین گیلن پانی کی قلت ہوئی ،ضلع غربی اورنارتھ کراچی کے علاوہ شہر کے اہم علاقے متاثر ہوئے۔

Tags: