سرکاری املاک کی غیر قانونی لیز منسوخ کرنے کی مہم شروع کردی وزیر بلدیات سندھ

July 31, 2015 5:16 pm0 commentsViews: 46

کراچی سمیت سندھ بھر میں سرکاری زمینوں‘ بنگلوں اور دیگر مقامات پر غیر قانونی قبضوں کے خاتمے کیلئے کمیٹی تشکیل دیدی ہے
کھیلوں کے میدان اور رفاہی پلاٹس پر قائم شادی ہالز کے خلاف بھی کارروائی ہوگی‘ کلفٹن میں بنگلے کا قبضہ لینے کے موقع پر بات چیت
کراچی( نیوز ایجنسیاں) سندھ کے وزیر بلدیات سید ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ کلفٹن تین تلوار کے علاقے میں سابق نائب  ناظمہ نسرین جلیل کے زیر استعمال بنگلہ خالی کرالیا گیا ہے۔ بنگلہ کی لیز ناجائز طریقے سے نجی طور پر کسی کے نام پر منتقل کی گئی تھی۔ غیر قانونی طور پر سرکاری زمینوں اور املاک کی لیز کو منسوخ کرنے کی مہم شروع کر دی ہے۔ جو عناصر بھی اس میں ملوث ہیں ان کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جا رہی ہے۔ کمشنر و ایڈمنسٹریٹر کراچی کو واضح احکامات دئیے گئے ہیں کہ وہ تمام ایسی سرکاری املاک اور زمینوں کا سروے کرائیں اور ان کی اگر غیر قانونی طور پر لیز کی گئی ہے تو اس کو منسوخ کر دیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کلفٹن تین تلوار سے متصل کے ایم سی کے پلاٹ نمبرD-28 اورD-29 کی غیر قانونی لیز کے خاتمے کے بعد وہاں کا دوبارہ قبضہ لینے کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ کراچی سمیت سندھ بھر میں سرکاری زمینوں، بنگلوں اور دیگر مقامات پر قانونی قبضوں یا ان کی غیر قانونی لیز کے خلاف ایک کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔ جو آئندہ چند روز میں اپنی رپورٹ پیش کر دے گی۔ انہوں نے کہا کہ ڈسٹرکٹ سائوتھ میں بلاول ہائوس اور اطراف کے علاقوں میں قائم تجاوزات اور وہاں مکمل صفائی کرکے اس کی رپورٹ48 گھنٹوں میں پیش کی جائے اور کراچی میں جاری صفائی اور تجاوزات کے خلاف مہم کو مزید تیز کیا جائے۔ میرا کوئی سرکاری آفس نہیں ہے کراچی میں میں جہاں کوئی نالہ بھرا ہوا ہو یا کوئی تجاوزات ہو میں ان کے خاتمے کیلئے وہاں موجود رہتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ کھیلوں کے میدان، رفاہی و فلاحی پلاٹس پر غیر قانونی شادی ہالز، کمرشل یا دیگر کسی بھی قسم کے دفاتر کے خلاف بھی کارروائی کی جائے گی۔ اگر کسی بھی سیاسی جماعت کی جانب سے ان پر کوئی دفتر قائم کیا گیا ہے تو وہ بھی فوری طور پر اس کا خاتمہ کر دے ورنہ ہماری مشینری از خود ان کا خاتمہ کر دے گی۔

Tags: