بیانات اور خطابات معمول سے کم کرنے کا فیصلہ

July 31, 2015 5:36 pm0 commentsViews: 29

رابطہ کمیٹی کے اراکین کو کم اور نئے لوگوں کو شامل کرنے کا فیصلہ کیا گیا عوامی مسائل سینیٹرز اور ارکان اسمبلی حل کریں گے
کراچی میں غیر ضروری تعمیرات اور زمینوں کی خرید و فروخت پر ایم کیو ایم کو تحفظات‘ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کو آگاہ کردیا گیا
کراچی( نیوز ایجنسیاں) متحدہ قومی موومنٹ نے سندھ کی موجودہ سیاسی صورتحال کو مد نظر رکھتے ہوئے اپنی سیاسی اور پارٹی کے دیگر معاملات میں تبدیلی لانے کا فیصلہ کیا ہے‘ اس سلسلے میں ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے رابطہ کمیٹی کے مشورے پر عمل کرتے ہوئے میڈیا میں بیانات اور خطابات معمول سے کم کردیں گے‘ ذرائع کے مطابق اس کے علاوہ رابطہ کمیٹی کے اراکین کی تعداد اب پہلے کی طرح زیادہ نہیں رکھی جائیگی۔ اس میں زیادہ تر نئے لوگوں کو شامل کیا جائیگا‘ اس کے علاوہ تمام عہدیداران کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ خود زیادہ آگے نہیں آئیں اور عوامی مسائل کے اور دیگر معاملات میں اراکین قومی وصوبائی اسمبلی اور سینیٹرز کو آگے لائیں اور ان ہی کے ذریعے سارے معاملات دیکھے جائیں ‘ ذرائع نے بتایا کہ لندن قیادت کو کراچی میں ہونیوالی غیر ضروری تعمیرات اور زمینوں کی خرید و فروخت کے حوالے سے بھی بہت شکایات مل رہی ہیں جس کی وجہ سے متحدہ کے ایک چار رکنی وفد نے سندھ بلڈ نگ کنٹرول اتھارٹی کے افسران سے ملاقات کی ہے اور انہیں ایم کیو ایم کے تحفظات کے حوالے سے آگاہ کیا ہے۔ اس مسئلے پر بھی ایم کیو ایم کی قیادت نے اراکین اسمبلی کو کہا ہے کہ وہ اسے دیکھیں البتہ عہدیداران کو اپنے دفاتر میں بیٹھنے کی ہدایت کی گئی

Tags: