بھارتی فوج یا حکومت سے مہاجروں کو بچانے کا مطالبہ نہیں کیا‘الطاف حسین

August 4, 2015 5:14 pm0 commentsViews: 23

الزامات لگانے والوں نے میری تقریر میں یہ جملے پیش کردیئے تو اپنی گردن کٹوانے پرتیار ہوں‘ ہمیں انصاف نہیں مل رہا
ظلم و ستم پر عالمی عدالت کا دروازہ نہ کھٹکھٹائوں تو کس دروازے پر دستک دوں؟ کارکنوں سے خطاب
لندن( نیوز ڈیسک) متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ انہوں نے بھارتی فوج یا بھارتی حکومت سے مہاجروں کو بچانے کا مطالبہ نہیں کیا‘ جو لوگ بھی یہ جملہ مجھ سے منسوب کررہے ہیں وہ حقائق کو مسخ کررہے ہیں‘ میں انہیں چیلنج کرتا ہوں کہ اگر یہ الفاظ کہے ہوں تو دنیا کے کسی بھی فورم پر میری تقریر کے یہ جملے سنائیں‘ اپنے ایک بیان مین الطاف حسین کا کہنا تھا کہ اگر الزامات لگانے والوں نے میری تقریر کے یہ جملے پیش کردیئے تو میں اپنی گردن کٹانے کیلئے تیار ہوں اور اگر الزامات لگانے والے یہ جملے نہ پیش کرسکیں تو چلو بھر پانی میں ڈوب مریں‘پیر کی شب کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے الطاف حسین نے کہا کہ پاکستان میں ایم کیو ایم کے لوگوں کے ساتھ تیسرے درجے کے شہریوں جیسا سلوک کیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کوئی ملک ‘ مذہب‘ لسانیت‘ ثقافت‘ کلچر یا زبان کی بنیاد پر اپنے لوگوں کو ظلم و ستم کو نشانہ بنائے تو مظلوم قوم اپنے تحفظ کیلئے اقوام متحدہ سے رجوع کرسکتی ہے‘ آج تک ماورائے عدالت قتل میں ملوث کسی اہلکار کو نہ تو گرفتار کیا گیا اور نہ ہی کسی کو سزا دی گئی‘ اس ظلم و ستم اور کھلی نا انصافی پر میں عالمی عدالت کا دروازہ نہ کھٹکھٹائوںتو انصاف کیلئے کس دروازے پر دستک دوں؟

Tags: