سرجانی، نالے میں ڈوبنے والے بچے کی لاش نکال لی گئی

August 4, 2015 5:40 pm0 commentsViews: 21

لانڈھی میں گاڑی کی ٹکر سے خاتون ہلاک، شناخت نہیں ہو سکی، لیاقت آباد میں موٹر سائیکل سوار حادثے میں ہلاک
گڈاپ میں راہگیر گاڑی سے کچلا گیا، سرجانی میں بچہ اتوار کے روز نالے میں ڈوب گیا تھا
کراچی (کرائم رپورٹر) شہرقائد میں ٹریفک حادثات سرجانی میں ایک روز قبل نالے میں ڈوبنے والے بچے کی لاش نکال لی گئی۔تفصیلات کے مطابق لانڈھی کے علاقے چراغ ہوٹل کے قریب تیز رفتار گاڑی کی ٹکر سے50سالہ نامعلوم خاتون موقع پر ہی جاں بحق ہو گئی ۔متوفیہ کے پاس سے ایسی کوئی چیز نہیں ملی جس سے اسکی شناخت ہوسکے پولیس نے ضابطے کی کارروائی کے بعد لاش کو ورثاء کی شناخت کے لیے ایدھی سرد خانے منتقل کر دیا ہے۔سپر مارکیٹ کے علاقے لیاقت آباد میں تیز رفتار گاڑی نے موٹر سائیکل سوار کو کچل ڈالا جس کے نتیجے میں35سالہ رانی زوجہ کامران موقع پر ہی جاں بحق ہو گئی واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس موقع پرپہنچ گئی اور لاش کو تحویل میں لے کر عباسی شہید اسپتال منتقل کیا،پولیس کے مطابق متوفیہ جٹ لائن لائنز ایریا کی رہائشی تھی۔ لیاری ایکسپریس وے لیاری ندی نزد دھوبی گھاٹ کے قریب تیز رفتار گاڑی کی ٹکر سے موٹر سائیکل سوار25 سالہ نوجوان شدید زخمی ہوگیا جسے سول اسپتال پہنچایا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا۔ گڈاپ سٹی کے علاقے سپرہائی وے دادا بھائی سیمنٹ فیکٹری کے قریب نامعلوم گاڑی نے راہگیر35سالہ شخص کو کچل د یا اور موقع سے فرارہوگیا ،شاہ لطیف ٹائون کے علاقے لانڈھی ریلوے اسٹیشن کے قریب سے28سالہ آصف ولد گوہر رحمان کی لاش ملی ،بعدازاں سرجانی کے علاقے خد ا کی بستی میں اتوار کو نالے میں ڈوبنے والے بچے فیضان ولد خالد کی لاش پیر کو نکال لی گئی ، پولیس کے مطابق متوفی خدا کی بستی کا رہنے والا تھا اور اتوار کو کھیل کے دوران وہ نالے میں گر گیا تھا اور اسے دن بھر ڈھونڈنے کی کوشش کی گئی تاہم پیر کو اسکی لاش برآمد ہوگئی جسے ضابطے کی کارروائی کے بعد ورثا کے حوالے کردیا گیا۔

Tags: