کے الیکٹرک نے ریکوری کی ذمہ داری صارفین پر ڈال دی

August 5, 2015 5:13 pm0 commentsViews: 20

مکمل ریکوری کے بغیر گلشن غازی کے علاقے بلاک اے کی8 ماہ سے بند بجلی بحال کرنے سے انکار
اعلیٰ حکام کے الیکٹرک سے باز پرس کریں، بجلی بحال نہ ہوئی تو احتجاج کرینگے، مکینوں کا موقف
کراچی( نیوز ڈیسک) کراچی میں لوڈشیڈنگ جاری ہے جبکہ کے الیکٹرک کی جانب سے شہریوںکو پریشان کرنے کا وطیرہبھی رک نہیں سکا اور اب ریکوری کی ذمہ داری بھی صارفین پر ڈالی جارہی ہے‘ تفصیلات کے مطابق گلشن غازی کے علاقے بلاک اے روڈ 2 میں کے الیکٹرک گزشتہ8 ماہ سے پی ایم ٹی بند کرکے علاقے کو بجلی کی فراہمی معطل کررکھی ہے جبکہ بار بار درخواستوں اور شکایات کے باوجود کے الیکٹرک کے ذمہ داران نے علاقے کو بجلی فراہمی بحال کرنے سے یکسر انکار کردیا ہے‘ علاقے کے صارفین نے بتایا کہ پہلے متعدد بار شکایات پر پی ایم ٹی کی خرابی دور کرکے بجلی بحال کرنے کی یقین دہانی کروائی جاتی ریہ تاہم اب پاور ہائوس گلشن غازی کے ذمہ داران نے کہا ہے کہ علاقے کے مکین نا دہندہ صارفین سے واجبات وصول کرکے کے الیکٹرک کو دیں اس کے بعد ہی علاقے کو بجلی کی فراہمی بحال کی جائیگی۔ علاقے کے مکینوں نے بتایا کہ کے الیکٹرک نے8 ماہ سے بجلی کی فراہمی بند کررکھی ہے‘ اس کے باجود ہر ماہ5‘6 ہزار روپے کا بل بھیج دیا جاتا ہے‘ انہوں نے اعلیٰ حکام سے اپیل کی ہے کہ کے الیکٹرک کے حکام سے باز پرس کی جائے اور ہمارے علاقے کی بجلی کی فراہمی بحال کروائی جائے بصورت دیگر وہ کے الیکٹرک کے دفاتر کا گھیرائو کرکے احتجاج کریں گے اور بجلی کی بحالی تک احتجاج جاری رکھا جائیگا۔

Tags: