اقوام متحدہ کی ٹیم خود دیکھے ظلم کون کررہا ہے ہے‘ الطاف حسین

August 5, 2015 5:13 pm0 commentsViews: 26

ہمارے لوگ لاپتہ ہورہے ہیں‘ ماورائے عدالت قتل کیا جارہا ہے جو غائب کردیئے گئے ان کو کہاں سے لائوں؟
اگر کوئی یہ کہتا ہے کہ عدالتیں آزاد ہیں تو وہ جھوٹ بولتا ہے‘ متحدہ کے قائد کا کارکنوں سے ٹیلی فونک خطاب
کراچی( اسٹاف رپورٹر) متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ ہمارے لوگ لاپتہ ہورہے ہیں‘ ماورائے عدالت قتل ہورہے ہیں‘ میری تقریر پر جو لوگ واویلا کررہے ہیں ان سے سوال کرتا ہوں کہ میرے جو ساتھی ماورائے عدالت قتل کردیئے گئے جو غائب کردیئے گئے میں انہیں کہاں سے لائوں؟ ہم پر چاہے پابندی لگائیں جو بھی کریں ‘جبر و ستم کے ہتھکنڈوں کے آگے سر نہیں جھکائیں گے اور پر امن طریقے سے اپنی جدوجہد جاری رکھیں گے‘ یہ بات انہوں نے میر پور خاص‘ سکھر‘ نواب شاہ‘ سانگھڑ‘ ٹنڈو الہ یار اور جامشورو زون کے ذمہ داران اور کارکنان سے ٹیلی فون پر خطاب کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ اگر کوئی یہ کہتا ہے کہ عدالتیں آزاد ہیں تو وہ جھوٹ بولتا ہے‘ کیوں کہ ہمارے کئی لاپتہ ساتھیوں کے اہل خانہ نے سپریم کورٹ میں درخواستیں دائر کررکھی ہیں لیکن اب تک کسی ایک کا بھی جواب آیا؟ لاپتہ کرنے والے کسی ایک فرد کو بھی سزا ہوئی؟ یہ کس آئین او ر قانون میں لکھا ہے کہ آپ کسی کو گرفتار کریں‘ غیر قانونی حراست میں رکھیں اور ٹارچر کرکے کسی زیر حراست فرد کو ماردیں؟ دنیا بھر میں جہاں جہاں کسی قسم کے بے گناہ لوگوں کو قتل عام کیا گیا وہ انصاف کیلئے اقوام متحدہ گئی‘ میرا یہی کہنا ہے کہ اقوام متحدہ کی ٹیم خود دیکھے کہ ظلم کون کررہا ہے؟ انہوں نے سندھی بولنے والے کارکنوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ نیا صوبہ صرف مہاجروں کا نہیں بلکہ سندھیوں اور یہاں آباد تمام زبانیں بولنے والوں کا ہوگا‘ نام نہاد عناصر عوام کو نہیں دے سکتے۔اب وقت آرہا ہے کہ تمام محروم عوام ملک کر اپنے حقوق حاصل کریں گے‘ اگر میرا اپنے ساتھیوں کو ظلم و زیادتی کی تحقیقات کیلئے اقوام متحدہ کو خط لکھنے کی بات کرنا غلط ہے تو پھر میاں نواز شریف اور آصف زرداری جواب دیں کہ انہوں نے بینظیر بھٹو کے قتل کی تحقیقات کیلئے اقوام متحدہ اور اسکاٹ لینڈ یارڈ کی ٹیم پاکستان کیوں بلوائی تھی۔

Tags: