بھتہ خور میاں بیوی سمیت 21 ملزمان گرفتار‘ اسلحہ و منشیات برآمد

August 5, 2015 5:17 pm0 commentsViews: 32

رینجرز نے متحدہ کے کارکن کو حراست میں لے لیا‘ پولیس نے ایدھی ہوم ڈکیتی کے ملزم کی اہلیہ اور بیٹے کو گرفتار کرکے بانڈز اور زیورات برآمد کرلئے
چائنا کٹنگ میں ملوث ملزم کی نشاندہی پر 2 ساتھی گرفتار‘ سچل میں کمسن بچی کو زیادتی کرکے قتل کرنے والے مزید 2 ملزمان پکڑے گئے
کراچی( کرائم رپورٹر) رینجرز اور پولیس نے شہر کے مختلف علاقوں میں کارروائی کے بعد بھتہ خور میاں بیوی سمیت 21 ملزمان کو گرفتار اور سیاسی جماعت کے کارکن سمیت 30 افراد کو حراست میں لے لیا‘ تفصیلات کے مطابق رینجرز ٹاسک فورس نے تاجر سے بھتے کی وصولی ناکام بناتے ہوئے ایک عورت کو گرفتار کرلیا اور اس کی نشاندہی پر اس کے شوہر عمران عرف کوا کو بھی گرفتار کرلیا‘ ترجمان نے بتایا کہ گرفتار ملزمان میاں بیوی ہیں اور گینگ وار کے نام سے تاجروں سے بھتہ وصول کرتے تھے‘ ملزمان نے3 وارداتوں کا اعتراف بھی کرلیا ہے۔ رینجرز نے خفیہ اطلاع پر لانڈھی کے علاقے میں کارراوئی کے بعد متحدہ یونٹ81 کے کارکن عبدالرئوف کو حراست میں لے لیا‘ حساس ادارے نے چائنا کٹنگ میںملوث ملزم طارق عزیز کی نشاندہی پر اس کے 2 ساتھیوں تنویر اور حنیف عرف چاچا ایگل کے دفتر واقع گلستان جوہر میں کارروائی کے بعد دفتر سے اہم دستاویزات اور لیپ ٹاپ تحویل میں لے لیا۔کاؤنٹر ٹیررازم ڈپارٹمنٹ انویسٹی گیشن کی ٹیم نے کارروائی کرتے ہوئے ایدھی ہوم میں ہونے والی ڈکیتی میں ملوث ملزم عمیر کی اہلیہ ثمینہ اور اسکے بیٹے بابر کو گرفتار کر کے انکے قبضے سے بانڈز اور طلائی زیورات برآمد کرلیے۔ ایس ایس پی سی ٹی ڈی انویسٹی گیشن نوید خواجہ کی ٹیم نے کارروائی گرفتار ملزم کی نشاندہی پر کی جبکہ اسی طرح ایک اور کارروائی کرتے ہوئے ملزم نعمان کو گرفتار کرلیا ، ملزم 2013میں سائٹ ایریا میں کیش وین میں ہونے والی لوٹ مار کی واردات میں ملوث تھا۔اورنگی ڈویژن پولیس کی بھاری نفری نے پیر آباد ، قصبہ ، بنارس اور اس کے اطراف کے علاقوں میں داخل ہوکر علاقوں میں قائم گیسٹ ہائوسز اور سرائے خانوں میں کریک ڈائون کیا اس دوران ایک درجن سے زائد افراد کو حراست میں لیکر ان سے تفتیش کے لیے انہیں نامعلوم مقام پر منتقل کردیا۔ اس سلسلے میں ایس پی اورنگی علی آصف کا کہنا ہے کہ مذکورہ کارروائی 14اگست سے قبل کسی بھی ممکنہ تخریب کاری کے خدشوں کے پیش نظر کی گئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جن افراد کو حراست میں لیا ہے یہ وہ افراد ہیں جو پاکستان میں اپنی موجودگی سے متعلق کوئی دستاویزات فراہم نہیں کرسکے ہیں یا پولیس کو مطمئن نہیں کرسکے ہیں جن سے مزید تفتیش جاری ہے انہوں نے کہا کہ اس طرز کی کارروائیاں پورے اورنگی ڈویژن کے ساتھ ساتھ پورے شہر میں کی جائینگی ۔اسپیشل انویسٹی گیشن یونٹ پولیس نے خفیہ اطلاع پر کارروائی کرتے ہوئے ڈکیت گروپ کے سرغنہ صغیر ، دو خواتین سعدیہ نور ، عظمی رفیق ، محمد مصطفی اور محمد حسن کو گرفتار کرکے انکے قبضے سے دو ٹی ٹی پستول برآمد کرلی ، اس سلسلے میں ایس پی فاروق اعوان کا کہنا ہے کہ گرفتار ملزمان نے عیدالفطر سے دو روز قبل آرٹلری میدان تھانے کی حدود سے پاکستان نیوی کے کیپٹن حبیب کو اسلحہ کے زور یرغمال بنا کر نارتھ ناظم آباد لے گئے اور وہاں سے اے ٹی ایم سے پچاس ہزار روپے نکالنے کے بعد چھوڑ دیا تھا ‘ ، سچل انویسٹی گیشن پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے کمسن بچی کے قتل میں گرفتار ملزم عابد کی نشاندہی پر مزید دو ملزمان عمران اور شر محمد کو گرفتار کرلیا۔ شاہ لطیف پولیس نے خفیہ اطلاع پر کارروائی کرتے ہوئے منشیات فروش راشد کو گرفتار کرکے اسکے قبضے سے 3 کلو گرام اعلی کوالٹی کی چرس برآمد کرلی۔

یونیورسٹی روڈ پر پولیس مقابلہ
‘ ملزم زخمی حالت میں گرفتار
کراچی( کرائم رپورٹر)جمشید کوارٹرزپولیس نے مین یونیورسٹی روڈ نزد ایدھی کمپلین سینٹر کے قریب پولیس نے مقابلے بعد ایک ملزم عامر کو مقابلے کے بعد زخمی حالت میں گرفتارکر کے قبضے سے نائن ایم ایم پستول ،مسروقہ موٹر سائیکل اور دو موبائل فونز برآمد کرلیے ،جبکہ اس کا ساتھی موقع سے فرا ر ہوگیا۔ادھر بلال کالونی پولیس نے علاقے میں گشت کے دوران غیر قانونی طو ر پر مقیم افغان باشندے نصب اللہ کو گرفتارکرکے فارن ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرلیا۔

ایدھی سینٹر ڈکیتی میں ملوث ملزم کی اہلیہ اور بیٹا گرفتار
پولیس نے گرفتار ملزمان کی نشاندہی پر رقم اور سونا برآمد کیا تھا، گرفتار افراد سے پوچھ گچھ کی جارہی ہے
کراچی( کرائم رپورٹر) کاؤنٹر ٹیررازم ڈپارٹمنٹ انوسٹی گیشن کی ٹیم نے کارروائی کرتے ہوئے ایدھی ہوم میں ہونے والی ڈکیتی میں ملوث ملزم عمیر کی اہلیہ ثمینہ اور اسکے بیٹے بابر کو گرفتار کر کے قبضے سے بانڈز اور طلائی زیورات برآمد کرلیے،پولیس کے مطابق کارروائی گرفتار ملزم کی نشاندہی پر کی گئی،واضح رہے کہ ایدھی سینٹر سے 8ملزمان نے 13کروڑ روپے نقداور6کلو سونا لوٹا تھا اور ابتدائی طور پر چار ملزمان گرفتار ہوئے تھے جن کے قبضے سے تین کروڑ روپے اور آدھا پائو سونا برآمد کیا گیا تھا، گرفتار ملزموں سے مزید تفتیش جاری ہے،تاہم اسی پولیس نے دوسری کارروائی میںملزم نعمان کو گرفتار کرلیا ، ملزم 2013ء میں سائٹ ایریا میں کیش وین میں ہونے والی واردات میں ملوث تھا۔

ڈکیت گروہ کے 5کارندوں سمیت 8 ملزمان گرفتار
سچل پولیس نے کمسن بچی کے قتل میں گرفتار ملزم کی نشاندہی پر اس کے دو ساتھیوں کو گرفتار کرلیا
نیوی کیپٹن کو یرغمال بنانے کے بعد اے ٹی ایم سے 50 ہزار نکلوالنے والوں کا گروہ بھی پکڑا گیا
کراچی (کرائم رپورٹر)ایس آئی یواور دیگر پولیس نے مختلف کارروائیاں کرتے ہوئے ڈکیت گروہ کے پانچ کارندوںسمیت 8 ملزمان کو گرفتار کرلیا، گرفتار دو ملزمان نے پانچ روز قبل کمسن بچی کو زیادتی کے بعد قتل کیا تھا تفصیلات کے مطابق اسپیشل انویسٹی گیشن یونٹ پولیس نے خفیہ اطلاع پر کارروائی کرتے ہوئے ڈکیت گروپ کے سرغنہ صغیر ، دو خواتین سعدیہ نور ، عظمی رفیق ، محمد مصطفی اور محمد حسن کو گرفتار کرکے انکے قبضے سے دو ٹی ٹی پستول برآمد کرلی ، اس ضمن میں پولیس کا کہنا ہے کہ گرفتار ملزمان نے عیدالفطر سے دو روز قبل آرٹلری میدان تھانے کی حدود سے پاکستان نیوی کے کیپٹن حبیب کو اسلحہ کے زورپر یرغمال بنا کر نارتھ ناظم آباد لے گئے اور وہاں سے اے ٹی ایم سے پچاس ہزار روپے نکالنے کے بعد چھوڑ دیا تھا ، گرفتار ملزمان سے مزید تفتیش کی جارہی ہے ، سچل انویسٹی گیشن پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے کمسن بچی کے قتل میں گرفتار ملزم عابد کی نشاندہی پر مزید دو ملزمان عمران اور شر محمد کو گرفتار کرلیا،ایس آئی او گل بہار کے مطابق گرفتار ملزمان نے پانچ روز قبل سچل گوٹھ سے کمسن بچی8 سالہ حمیرا کو اغواء کرنے کے بعد زیادتی کا نشانہ بنایا بعدازاں گلا دبا کر قتل کردیا تھا اور لاش سچل کے علاقے عبداللہ شاہ غازی گوٹھ میں پھینک دی تھی۔