وفاقی حکومت نے ود ہولڈنگ ٹیکس واپس نہ لینے کا اعلان کردیا

August 8, 2015 4:53 pm0 commentsViews: 31

ایف بی آر ود ہولڈنگ ٹیکس واپس نہ لینے پر ڈٹ گئی حکومت اور تاجروں کے درمیان مذاکرات ناکام ہوچکے ہیں
حکومتی فیصلے پر تاجر برادری کا شدید احتجاج‘ سول نافرمانی اور غیر معینہ مدت کی ہڑتال کااعلان
کراچی( کامرس ڈیسک) وفاقی حکومت نے ود ہولڈنگ کوٹیکس واپس نہ لینے کا اعلان کر دیا۔ ذرائع کے مطابق سینئر ممبر ایف بی آر نے کہا ہے کہ ود ہولڈنگ ٹیکس واپس نہیں لے سکتے، معاملے پر حکومت اور تاجروں کے درمیان مذاکرات کا عمل جاری ہے۔ ٹیکس گوشوارے جمع نہ کروانے والوں پر ود ہولڈنگ ٹیکس لاگو ہے۔ لاکھوں تاجر ٹیکس نہیں دیتے۔ واضح رہے کہ کراچی سمیت ملک بھر کی تاجر برادری نے ایف بی آر کی جانب سے بینک ٹرانزکشن کے دوران6 فیصد ود ہولڈنگ ٹیکس کو مسترد کرتے ہوئے یکم اگست اور5 اگست کو مکمل شٹر ڈائون کیا تھا۔ اور حکومتی فیصلے پر سخت احتجاج کرتے ہوئے بینکوں سے لین دین بند کرنے کے علاوہ سول نا فرمانی شروع کرنے کا اعلان کیا۔ قبل ازیں حکومت اور تاجر برادری کے درمیان ود ہولڈنگ ٹیکس کے مسئلے پر مذاکرات بار بار ناکام ہو چکے ہیں تاجر برادری کا کہنا ہے کہ ود ہولڈنگ ٹیکس ظالمانہ ہے۔ جس کے خلاف ہم آواز بلند کریں گے۔ تاجر برادری نے حکومتی فیصلے کے خلاف غیر معینہ مدت کے لئے ہڑتال کی دھمکی دیدی ہے۔

Tags: