بلدیہ کراچی کے30 نالوں کی لیز منسوخ تجاوزات ہٹانے کی ہدایت

August 8, 2015 4:56 pm0 commentsViews: 20

کمشنر کراچی نے ملوث اہلکاروں کیخلاف کارروائی کی منظوری دیدی، عام نالوں کی اصل حدود بحال
کراچی( اسٹاف رپورٹر) ایڈمنسٹریٹر کراچی شعیب احمد صدیقی نے کونسل کے اختیارات کو استعمال کرتے ہوئے بلدیہ عظمیٰ کراچی کی حدود میں واقع 30 نالوں سمیت شہر کے دیگر تمام چھوٹے بڑے نالوں پر دی گئی غیر قانونی لیز کو منسوخ کر دیا ہے اور بلدیہ عظمیٰ کراچی کو غیر قانونی قابضیبن/ تجاوزات کو فوری ہٹانے کی منظوری جبکہ لیز پر دینے میں ملوث اہلکاروں کے خلاف ای اینڈ ڈی رولز کے تحت کارروائی کی منظوری دی ہے۔ اس قرار داد کی منظوری کے بعد ان تمام نالوں کی اصل حدود کو بحال کر دیا گیا جو ماسٹر پلان میں موجود ہے جبکہ یہاں ہونے والی تمام تعمیرات کو غیر قانونی قرار دے دیا گیا ہے۔ خواہ کسی نے لیز ہی کیوں نہ حاصل کر رکھی ہو۔ اس لیز کو غیر قانونی قرار دیا گیا ہے۔ میٹرو پولیٹن کمشنر سمیع الدین صدیقی کی جانب سے اس حوالے سے پیش کی گئی یادداشت میں کہا گیا ہے کہ بلدیہ عظمیٰ کراچی کی حدود میں واقع ندی نالوں اور قدرتی بہائو کے راستوں پر ماضی میں غیر قانونی طور پر تجاوزات قائم ہوتی رہی ہیں اور ان میں سے بیشتر کو غیر قانونی طور پر لیز کا اجراء ہو چکا تھا جس کی وجہ سے ان نالوں کی اصل ہئیت میں تبدیلی واقع ہوگئی ہے۔

Tags: