شیشہ ٹوٹ کر لگنے سے8 سالہ بچہ اور2 نوجوان گاڑی سے کچل کر ہلاک -مختلف حادثات میں مزید ہلاکتیں

August 12, 2015 2:29 pm0 commentsViews: 13

بنارس پل پر منی بس نے موٹر سائیکل سوار نوجوان کو ٹکر مارنے کے بعد پچھلے ٹائر سے روند ڈالا، مشتعل افراد نے بس کو آگ لگا دی
منگھوپیر میں الغازی بنگلور میں48 سالہ شخص کی پنکھے سے لٹکی لاش برآمد، متوفی ذہنی مریض تھا، پولیس
کراچی (کرائم رپورٹر)شہر میں ٹریفک حادثات میں دو افراد ہلاک ہوگئے ، مشتعل افراد نے بس کو آگ لگادی، جبکہ دیگر واقعات میں بچے سمیت 2 افراد ہلاک ہوگئے ، تفصیلات کے مطابق کلفٹن کے علاقے دو تلوار کے قریب انڈر بائی پاس کے قریب نامعلوم گاڑی کی ٹکر سے موٹر سائیکل سوار 27سالہ شخص ہلاک ہوگیا، پیرآباد تھانے کی حدود بنارس پل پر تیز رفتار موٹرسائیکل سوار اوورٹیکنگ کے دروان منی بس سے ٹکرا گیاجس کے باعث موٹرسائیکل پر سوار دو نوجوان بس کے پچھلے ٹائر کے نیچے آگئے جس کے نتیجے میں 16سالہ دانیال ولد خلیل احمداور اور15سالہ علی رضاولد وسیم احمد شدید زخمی ہوگئے ۔ دوران علاج دانیال چل بساجبکہ زخمی علی رضا کی حالت تشوشناک بتائی جاتی ہے،جائے وقوعہ پر موجود مشتعل شہریوں نے بس کونذرآتش کردیاجبکہ بس ڈرائیور موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا،واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس موقع پر پہنچ گئی اور ہوائی فائرنگ کرکے مشتعل شہریوں کو منتشر کیااور آگ بجھانے کیلئے فائربریگیڈ کی گاڑی کو طلب کر لیا،دوسری جانب شہریوں کی جانب سے احتجاج اور منی بس نذر آتش کئے جانے کے باعث بدترین ٹریفک جام ہو گیا، پولیس کا کہنا ہے کہ متوفی بنارس چوک کا رہائشی تھا،۔کلاکوٹ کے علاقے سنگولین میں گھر میں کام کرنے کے دوران شیشہ ٹوٹ کر لگنے سے 8 سالہ بچہ فہیم ہلاک ہوگیا، ، منگھوپیر کے علاقے الغازی بنگلوز میں رہائش پذیر 48 سالہ سید حاتم ولد سید عالم نے گلے میں رسی کی مدد سے پھندا ڈال کر پنکھے سے لٹک کر خودکشی کرلی،۔ ا س ضمن میں ایس ایچ او غلام حسین کورائی کا کہنا ہے کہ متوفی کا ذہنی توازن درست نہیں تھا وہ اس سے قبل تین سے چار مرتبہ خودکشی کرنے کے کوشش کرچکا تھا ۔

سکھر سمیت اندرون سندھ میں پولیس مقابلے،7 ڈاکو ہلاک
ہلاک ہونے والے ملزمان میں2 انتہائی خطرناک ڈاکو شامل، پولیس ٹیم کیلئے8 لاکھ روپے انعام کا اعلان
کراچی(کرائم رپورٹر)اندرون سندھ میں پولیس کے مقابلے 7 ڈاکو مارے گئے،آئی جی سندھ نے پولیس پارٹی کو 8 لاکھ روپے انعام دینے کا اعلان کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق تھانہ جات صالحہ پٹ، ٹنڈو مستی اور سائٹ ایریا، سکھر پولیس رینج کی حدود میں علیحدہ علیحدہ ہونے والے پولیس مقابلوں میں پانچ ڈاکو عطاء محمد عرف عطو گڈانی، لیاقت علی کنڈھورو، شاہد میرانی ، وقار میرانی اور نامعلوم ہلاک ہوئے۔ ابتدائی تفتیش کے مطابق مذکورہ ڈاکو بالترتیب تھانہ جات کی حدود میں مختلف سنگین جرائم کی وارداتوں میں ملوث اور مطلوب تھے۔اسی طرح تھانہ بانڈی شہید بے نظیر آباد میں ہونے والے پولیس مقابلے میں دو(2) انتہائی خطرناک ڈاکو اُچڑ خاصخیلی اور ٹرٹ خاصخیلی ہلاک ہوئے جو کہ سنگین جرائم میں ملوث ہونے کے ساتھ ساتھ پولیس چیک پوسٹ پر دہشت گردانہ حملے میں بھی ملوث تھے۔ اس حملے میں کانسٹیبل عبدالقیوم شہید جبکہ کانسٹیبل پیر محمد زخمی ہوا تھا۔

نارتھ کراچی میں ڈاکوئوں نے مزاحمت پر نوجوان کو قتل کردیا
نوجوان فائرنگ کے واقعہ میں زخمی ہوا تھا، پولیس کا موقف، واقعہ کی مزید تفتیش جاری
کراچی(کرائم رپورٹر) خواجہ اجمیر نگری کے علاقے نارتھ کراچی بابا موڑ کے قریب نامعلوم مسلح ملزمان کی فائرنگ سے 25 سالہ ناصر ولد ظہور بخش نامی نوجوان ہلاک ہوگیا،جس کی لاش ایدھی فائونڈیشن کے ذریعے عباسی شہید اسپتال لائی گئی،علاقے سے ملنے والی اطلاع کے مطابق دو ملزمان ناصر سے اسلحے کے زور پر لوٹ مارکررہے تھے کہ انہوں نے مزاحمت پر اسے گولی مار کر قتل کردیا اور فرارہوگئے،دوسری جانب ایس ایچ او منگھوپیر غلام حسین کوارئی کاکہنا ہے کہ مقتول ناصربابا موڑ کے مقام پر فائرنگ کے واقعے میں زخمی ہوا،جو وہاں سے بھاگتا ہوا،منگھوپیر تھانے کی حدودمیں آکر گرا اور دم توڑ گیا،تاہم پولیس واقعے کی مزید تفتیش کررہی ہے۔

 

Tags: