دو کمسن بھائی جوہڑ میں ڈوب کر ہلاک، اہلخانہ کا احتجاج

August 13, 2015 3:57 pm0 commentsViews: 28

واٹر بورڈ نے چند ماہ قبل گڑھا کھود کر کام کیا تھا مگر گڑھا بند نہیں کیا، لاشیں کارروائی کے بعد ورثاء کے حوالے
کراچی(کرائم رپورٹر)احسن آباد کے علاقے میں پانی جوہڑ میںڈوب کر دوکمسن بھائی جاں بحق ہوگئے ،مشتعل اہلخانہ نے پولیس اورواٹر بورڈ کے عملے کے خلاف احتجاج کیا ،مشتعل افراد واٹر بورڈ کے عملے کے خلاف مقدمہ درج چاہئے چاہتے تھے ۔تفصیلات کے مطابق سائٹ سپر ہائی وے صنعتی ایریا کے علاقے احسن آباد رینا آباد میں واٹر بورڈ کی زیر زمین پانی کی ٹنکی میں نہانے کے دوران دو کمسن بھائی ڈوب گئے ، پولیس نے اطلاع ملتے ہی موقع پر پہنچ کر لاشوں کو نکال کر اپنی تحویل میں لے کر قانونی کارروائی کیلئے عباسی شہید اسپتال پہنچایا ، احسن آباد چوکی انچارج معراج انوار کا کہنا ہے کہ مذکورہ ڈوب کر جاں بحق ہونے والے بھائیوں کی شناخت 7سالہ شیرآغا ولد حاجی صدرو اسکا بھائی 10سالہ نبیل کے نام سے ہوئی جو جمالی گوٹھ کے رہائشی تھے اور کچرا چنتے تھے ،پولیس کے مطابق جس مقام پر یہ واقعہ رونماہوا اس مقام پر واٹر بورڈ کے عملے نے چند ماہ قبل کام کیا تھا اورگڑھے کو بند نہیں کیا۔مشتعل اہلخانہ نے تھانے کے باہر واٹر بورڈ اور پولیس کے عملے کے خلاف شدید احتجاج کیا جس پر پولیس نے انہیں یقین دہانی کروائی ہے کہ وہ تدفین کے بعد تھانے آکر واٹر بورڈ کے عملے کے خلاف مقدمہ درج کروالے اس یقین دہانی پر مشتعل افراد منتشر ہوگئے پولیس نے ضابطے کی کارروائی کے بعد لاشیں ورثاء کے حوالے کردی ۔

Tags: