تین سال میں30 سال پہلے والا پر امن کراچی لوٹا دینگے، ایڈیشنل آئی جی

August 13, 2015 3:57 pm0 commentsViews: 41

آپریشن جرائم کے خاتمے تک جاری رہے گا، ریاسی اداروں کے پاس واپسی کا کوئی راستہ نہیں ہے
کراچی(اسٹاف رپورٹر)ایڈیشنل آئی جی کراچی مشتاق احمدمہر نے کہاہے کہ کراچی شہرمیں قیام امن کے لیے شروع کیاگیاآپریشن جرائم کے خاتمے تک جاری رہے گا،ریاستی اداروں کے پاس اب واپسی کاکوئی راستہ نہیں ہے ،2سے3سالوں میں کراچی کے شہریوں کو30سال قبل والاپرامن کراچی لوٹائیں گے ۔میڈیا سے بات چیت میں انہوں نے کہا کہ پولیس کے پاس نفری اوروسائل کی شدیدکمی ہے ،وسائل کے لیے شہرکے سرمایہ کاروں سے تعاون لے رہے ہیں جبکہ پولیس کی نفری بڑھانے کے لیے وی آئی پی پروٹوکول میں تعینات پولیس اہلکاروںکوشہرکے مختلف تھانوں میں تعینات کرنے کاعمل شروع کیاجاچکاہے جس پر پولیس کے محکمے کو بھی کافی دبائو کاسامناہے ۔انہوں نے کہا کہ پولیس کومہیاتمام تروسائل کوشہرمیں قیام امن کے لیے بروئے کار لارہے ہیں، اس سلسلے میں شہرکے مختلف تھانوں کونئی گاڑیاں فراہم کردی گئی ہیں جبکہ شہریوں اورپولیس میں تعلقات کی بہتری کے لیے پولیس کوہدایت کی ہے کہ گاڑیوں میں لگے ہوئے ہارن بجانااورشہریوں کے ساتھ ہتک آمیز رویہ بندکریں۔انہوں نے کہا کہ کراچی میں تجاوزات کے خلاف کیے گئے آپریشن کے بعد دوبارہ سے تجاوزات کے قیام میں کے ایم سی کا عملہ،ٹریفک پولیس اورعلاقے کی پولیس تک سارے لوگ ملوث ہوتے ہیں،اس کی روک تھام کے لیے بھی اقدامات کیے جارہے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ ایک ماہ میں ٹیکسی اور رکشوں میں میٹر لگانے لگائے جائیں‘ اسکول وینز سے سی این جی اور ایل پی سلنڈر ختم کریئے جائیں ورنہ گاڑیوںکو ضبط اور ڈرائیور کو گرفتار کرلیا جائیگاجبکہ پیلا رنگ اسکولز وینز کیلئے لازمی ہوگا‘ چنگ چی رکشے دوبارہ سڑکوں پر نظر نہ آئے۔

Tags: