کراچی میں پولیس پر 8 ماہ بعد منظم حملہ ہوا، آئی جی سندھ

August 13, 2015 4:05 pm0 commentsViews: 18

شہید افسر و اہلکاروں کے قاتلوں کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے، نماز جنازہ کے موقع پر بات چیت
کورنگی میں شہید پولیس افسرواہلکاروں کی نماز جنازہ سعود آبادہیڈکوارٹر میں اداکی گئی، مقامی قبرستان میں تدفین
کراچی (اسٹاف رپورٹر) کورنگی میں دہشت گردوں کی فائرنگ سے شہید ہونے والے پولیس افسر و 3اہلکاروں کی نماز جنازہ سعود آباد ہیڈ کوارٹر میں ادا کردی گئی، نماز جنازہ میں آئی جی سندھ غلام حیدر جمالی، ایڈیشنل آئی جی کراچی مشتاق مہر، ڈی آئی جی ایسٹ منیر شیخ ، ڈی آئی جی اسپیشل برانچ زوالفقار لاڑک‘ ایس ایس پی ایسٹ جاوید جسکانی ، ایس ایس پی کورنگی نعیم شیخ و دیگر پولیس افسران اور شہیدوں کے اہلخانہ نے بڑی تعدادمیں شرکت کی ،بعدازاں پولیس افسر اے ایس آئی سید عقیل، پولیس اہلکار اختر، اہلکار جمیل اور اہلکار محمد انورکی میتوںکو ان کے گھروں پر روانہ کردی گئی اور مقامی قبرستان میں ان کی تدفین کی گئی، اس موقع پر آئی جی سندھ غلام حیدر جمالی نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ شہید افسران و اہلکاروں کے ورثا کو ایک ہفتے کے اندر رقوم اور ورثا کو نوکریاں دے دی جائیں گی ، شہید افسر و اہلکاروں کے قاتلوں کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے انہوں نے کہا8 ماہ بعد پولیس پر ایک منظم حملہ ہوا ہے جس میں ہمارے جوان شہید ہوئے ہیں، تاہم جرائم پیشہ افراد اور مزکورہ واقعے میں ملوث دہشت گردوں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔

Tags: