سرکاری نرخ نظر انداز ،مرغی کی قیمت300 روپے تک پہنچ گئی

August 13, 2015 4:09 pm0 commentsViews: 23

کرپٹ افسران کی ملی بھگت سے لوٹ مار کا بازار گرم، کمشنر کراچی کی رٹ خطرے میں پڑ گئی
کراچی(سٹی رپورٹر) ایڈیشنل کمشنر اور پرائس کنٹرول کرنے والے افسران و عملے کی مبینہ ملی بھگت ،شہر قائد میں منافع خوربے لگام ،عوام بے بس،ادارے ناکام ہوگئے ، کراچی میں برائیلر مرغی کی قیمت میں کمی ہونے کے باوجود منافع خوری نہ رک سکی،کرپٹ افسرا ن کی مبینہ ملی بھگت سے شہر بھر میں لوٹ مار کا بازار گرم،کمشنر کراچی سب ٹھیک ہے کی رپورٹ پر مطمئن،سرکاری نرخ ردی کی نذر کردیئے گئے،برائیلر مرغی کا گوشت220 کے بجائے 280 روپے میں کھلے عام فروخت ہوتا رہا،دکانوں سے سرکاری لسٹ بھی غائب،کمشنر کراچی ماتحت افسران کو قابو کرنے میں بری طرح ناکام،کمشنر کراچی کی رٹ خطرے میں پڑگئی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مرغی فروشوں نے افسران کی ملی بھگت سے سرکاری نرخ آویزا ںکرنا ہی چھوڑ دیا ہے جس کے باعث کراچی کے شہری مقررہ نرخ سے بھی مکمل طور پر لاعلم ہیں،گذشتہ روز 220روپے کلو مرغی کے گوشت کی مقررہ قیمت کے برعکس شہر بھر میں280سے300 روپے کلو تک مرغی کا گوشت فروخت کھلے عام فروخت کیا جاتا رہا جبکہ شہری انتظامیہ کی جانب سے مسلسل خاموشی اختیار کی جارہی ہے۔شہریوں نے منافع خوروں کے ساتھ ساتھ ان کی سرپرستی کرنے والے افسران کیخلاف بھی احتساب کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

Tags: