گیس کی قیمتیں مقرر نہ ہونے سے حکومت کو کھربوں کا نقصان

August 17, 2015 5:16 pm0 commentsViews: 33

اوگراسوئی سدرن اور سوئی نادرن گیس کمپنیوں کے لیے قیمتیں مقرر نہ کرسکی،6کھرب85 ارب روپے کا نقصان
کھربوں روپے کا بوجھ قدرتی گیس استعمال کرنے والے صارفین پر ڈالاجائے گا، ذرائع کا انکشاف
اسلام آباد( آن لائن ) آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی اوگرا کی جانب سے سوئی سدرن گیس اور سوئی ناردرن گیس کے لئے گیس کی قیمتیں مقرر نہ کئے جانے کی وجہ سے حکومت کو6 کھرب 85 ارب روپے سے زاید کا نقصان پہنچا ہے۔ دستاویزات کے مطابق اوگرا آرڈیننس کے تحت اتھارٹی ہر لائسنس ہولڈر کیلئے اپنے صارفین کو گیس فراہمی کی قیمتیں مقرر کرے گی اور اس سلسلے میں اوگرا حکومت کو گیس کی قیمتیں مقرر کرنے کی سفارش کرے گی۔ اگر مقررہ وقت کے دوران حکومت نے گیس کی قیمتیں مقرر نہ کیں تو اوگرا از خود گیس کی قیمتیں مقرر کرے گی۔ 2012-13 کے دوران اوگرا حکام نے نہ گیس کی قیمتیں مقرر کر کے اور نہ ہی فائل گزٹ میں قیمتوں کا اندراج کیا گیا۔ دستاویزات کے مطابق کھربوں روپے کا یہ بوجھ اوگرا کے ساتھ حکومت پر پڑے گا اور امکان ہے کہ یہ بوجھ قدرتی گیس استعمال کرنے والے صارفین پر ڈال دیا جائے گا۔ دونوں کمپنیوں کے افسران کا موقف ہے کہ ریگولیٹری اتھارٹی کا بوجھ جو کئی سالوں سے مکمل نہیں تھا کی وجہ سے نہ گیس کی قیمتیں مقرر کی گئیں اور نہ ہی کمپنوں کے اکائونٹس مکمل کئے جا سکے۔

Tags: