آج صبح، گلشن اقبال میں رینجرز سے مقابلہ، القاعدہ کمانڈر ساتھی سمیت ہلاک، حساس ادارے کا افسر شہید

August 18, 2015 3:59 pm0 commentsViews: 28

لیاری میں مقابلے کے دوران گینگ وار عزیر گروپ کے کمانڈر حنیف عرف چیمہ دو ساتھیوں سمیت مارا گیا، ایک ملزم ملیر میں ہلاک ہو گیا
دہشت گرد فہد پلازہ کے ایک فلیٹ میں رہائش پذیر تھے، سیکورٹی فورسز کو دیکھ کر مورچہ بند فائرنگ شروع کر دی اور مقابلے میں مارے گئے، فلیٹ سے بھاری تعداد میں اسلحہ اور بارودی مواد برآمد، ایک لڑکی کو بھی حراست میں لے لیا گیا
لیاری میں مقابلے کو اہل علاقہ نے جعلی قرار دے دیا، حنیف عرف چیمہ کو پولیس نے چند روز قبل دبئی سے واپسی پر حراست میں لیا تھا اہل خانہ کا الزام، تینوں ملزمان، قتل اغواء اور بھتہ خوری میں مطلوب تھے، پولیس
کراچی( کرائم رپورٹر) کراچی شہر میں تباہی کے منصوبے کو تیار کرنے والا اہم القاعدہ کمانڈر آج گلشن اقبال کے علاقے میں رینجرز اورحساس اداروں کی مشترکہ کارروائی میں ساتھی سمیت مارا گیا‘ بھاری تعداد میں اسلحہ ‘گولہ بارود اور جہادی لٹریچر برآمد ‘لیاری میں مقابلے کے دوران گینگ وار کمانڈر ساتھیوں سمیت ہلاک ہوگیا‘ ملیر میں بھی ایک ملزم مقابلے میں مارا گیا‘ تفصیلات کے مطابق انٹیلی جنس اداورں کی جانب سے کراچی کے علاقے گلشن اقبال بلاک13-D میں القاعدہ دہشت گردوں کی موجودگی کی اطلاع پر رینجرز اور حساس اداروں نے فہد پلازہ کا گھیرائو کرکے چھاپہ مارا جس پر فلیٹ میں موجود ملزمان نے مورچہ بند فائرنگ شروع کردی سیکورٹی فورسز اور دہشت گردوں کے درمیان کافی دیر تک مقابلہ جاری رہا‘ اس دوران دو ملزمان ہلاک ہوگئے جس میں ایک القاعدہ کا اہم کمانڈر عبدالاحد اور دوسرا اس کا ساتھی صالح محمد تھا‘ دہشت گردوں سے مقابلے کے دوران گولی لگنے سے حساس ادارے کا اسسٹنٹ ڈائریکٹر سجاد بھی شہید ہوگیا‘ رینجرز نے ملزمان کو مقابلے میں ہلاکت کے بعد فلیٹ سے بھاری تعداد میں اسلحہ گولہ بارود اور جہادی لٹریچر برآمد کرلیا‘ جبکہ ملزمان کے زیر استعمال ایک موٹر سائیکل بھی تحویل میں لے لی گئی‘ فلیٹ میں موجود ملزمان کی ایک ساتھی لڑکی کو بھی حراست میں لے کر پوچھ گچھ کیلئے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا ہے‘ علاقہ مکینوں کے مطابق ملزمان کی سرگرمیاں مشکوک تھیں اور وہ کسی سے میل جول بھی نہیں رکھتے تھے‘ پولیس نے مالک مکان کی تلاش بھی شروع کردی ہے‘ ذرائع کے مطابق القاعدہ کمانڈر عبدالاحد کراچی میں ساتھیوں کے ساتھ مل کر بڑی دہشت گردی کا منصوبہ تیار کررہا تھا‘ دوسری طرف لیاری میں پولیس کے مبینہ مقابلے کے دوران لیاری گینگ وار عزیر گروپ کا کمانڈر دوساتھیوں سمیت مارا گیا۔لیاری ڈویژن پولیس کی بھاری نفری نے کلاکوٹ کے علاقے کھڈو لین میں مقابلے کے دوران لیاری گینگ وار عزیر گروپ کے سیفی لین کے کمانڈرحنیف عرف چیمہ اسکے دوساتھیوں فیصل باپواور صغیر عرف لنگڑا کو ہلاک کردیا ،پولیس نے دعوی کیا ہے کہ انکے چند ساتھی فائرنگ کرتے ہوئے تنگ گلیوں سے فرار ہوگئے،ڈی ایس پی انور علی شاہ کے مطابق ہلاک ہونے والے کارندے فیصل پٹھان کے قریبی ساتھی تھے ،حنیف عرف چیمہ عزیر بلوچ کے قریبی ساتھی سنی کابھائی تھا ،مقابلے میں ہلاک ہونے والے تینوں کارندے پولیس کو قتل،اغواء برائے تاوان اور بھتہ خوری سمیت دیگرسنگین جرائم میں پولیس کو مطلوب تھے،جن کے قبضے سے پولیس نے اسلحہ اور دستی بم بھی برآمد کیے ہیں،تاہم ہلاک کارندوں کی لاشیں سول اسپتال پہنچی تو وہاں پہلے سے موجود حنیف عرف چیمہ کے مشتعل اہلخانہ اور علاقہ مکین پہنچے ہوئے تھے جنھوں نے پولیس کے خلاف نعرے بازی کی اور مقابلے کو جعلی قرار دینے کا الزام عائد کیا ،مشتعل افراد کا کہنا ہے کہ حنیف کو چندروز قبل دبئی سے واپسی پر حراست میںلیا تھا ،حنیف بغدادی کے علاقے رام گڑھ کا رہائشی تھا ۔الفلاح کے علاقے ملیر رفاء عام سوسائٹی شمسی مسجد کے عقب میںدو ملزمان اسلحے کے زور پر لوٹ مارکررہے تھے،موجودپولیس اہلکاروں کا اور ملزمان کا ٹکرائو ہوااوراس دوران دو بدو فائرنگ کے تبادلے میں ایک ملزم ہلاک ہوگیا،جبکہ اس کا ساتھی موقع سے فرارہوگیا،ایس ایچ او کے مطابق ہلاک ملزم کی شناخت تابش ولد محمد ایوب رائو کے نام سے ہوئی جو الفلاح کے علاقے میں واقعہ ملت روڈ کا رہائشی تھا،تاہم ہلاک ملزم کے قبضے سے اسلحہ اور موٹر سائیکل برآمد ہوئی ،ملزم کی لاش پولیس نے کارروائی کیلئے اسپتال منتقل کردی ہے۔

Tags: