رشید گوڈیل کی حالت تشویشناک‘ آج کا دن اہم ہے ڈاکٹرز جان بچانے کی کوشش کررہے ہیں

August 19, 2015 4:28 pm0 commentsViews: 32

متحدہ کے رکن قومی اسمبلی کوبہادر آباد میں نشانہ بنایا گیا ڈرائیور موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا‘ رشید گوڈیل کو 6 گولیاں لگی ہیں اور وہ شدید زخی حالت میں اسپتال میں زندگی اور موت کی جنگ لڑرہے ہیں
رشید گوڈیل اپنے گھر جارہے تھے‘ دہشت گردوں نے شناخت کے بعد گولیاں برسادیں‘ گاڑی میں ان کی اہلیہ بھی موجود تھی جو معجزانہ طور پرمحفوظ رہیں‘ تحقیقات کیلئے کمیٹی تشکیل
کراچی( کرائم رپورٹر) قاتلانہ حملے میں شدید زخمی ہونیوالے متحدہ کے رکن قومی اسمبلی عبدالرشید گوڈیل کی حالت بد ستور تشویشناک ہے‘ ڈاکٹرز ان کی جان بچانے کی کوشش کررہے ہیں‘ رشید گوڈیل کیلئے آج کا دن انتہائی اہم قرار دیا گیا ہے‘ آج صبح ڈاکٹر نے نے ان کو وینٹی لیٹر کے ذریعے دی جانیوالی آکسیجن میں کمی کی ہے‘ تاہم رشید گوڈیل کی حالت میں بہتری نہیں آسکی ہے اور وہ لیاقت نیشنل اسپتال میں زندگی اور موت کی جنگ لڑرہے ہیں‘ گزشتہ روز نیو ٹائون تھانے کی حدود بہادرآباد میں دن دیہاڑے موٹر سائیکل سوار ملزمان نے متحدہ قومی موومنٹ کے کا رکن قومی اسمبلی رشید گوڈیل کی کار پر حملہ کیا گیا جس کے نتیجے میں انکا ڈرائیور جاں بحق ہوگیا جبکہ6گولیاں جسم کے مختلف حصوں پر لگنے سے رشید گوڈیل شدید زخمی ہوگئے ۔پولیس نے واقعے کی تفتیش کے لیے ڈی آئی جی اسیٹ کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دے دی ہے جس نے واردات کے فوری بعد تفتیش کا سلسلہ شروع کردیا گیا ہے اور اطراف میں نصب کیمروں کی مدد حاصل کرنا شروع کردی ہے۔، اس موقع پر ایڈیشنل آئی جی کراچی مشتاق مہر نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ رشید گوڈیل بہادرآباد میں واقع ڈپارٹمنٹل اسٹور سے شاپنگ کر کے اپنی رہائشگاہ عارف آرکیڈ جارہے تھے اور وہ جیسے ہی گلی نمبر 3میں پہنچے تو وہاں پہلے سے گھات لگائے ملزمان نے انہیں شناخت کے بعد ان پر قاتلانہ حملہ کیا انہوں نے بتایا کہ جائے وقوعہ سے نائن ایم ایم کے 8خول کو تحویل میں لے کر فرانزک لیبارٹری بھجوادیا گیا ہے انہوں نے کہا کہ رشید گوڈیل کے ساتھ کوئی سیکورٹی اہلکار موجود نہیں تھا انہوں نے کہا واقعے کی تفتیش کے لیے ڈی آئی جی ایسٹ منیر شیخ کی سربراہی میں ایک کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے جس میں ایس ایس پی انویسٹی گیشن ایسٹI، ایس ایس پی ایسٹ، ایس ایس پی ایس آئی یو شامل ہیں جو واقعے کی ہر زاویے سے تفتیش کر کے فوری رپورٹ پیش کریں گے۔ڈاکٹرز کے مطابق ممبر قومی اسمبلی رشید گوڈیل کی گردن میں دو اور سینے میں تین گولیاں لگیں ، سینے میں لگنے والی گولی کے باعث انکے پھیپڑے جبکہ گردن میں لگنے والی گولی کے باعث انکی سانس کی نالی متاثر ہوئی ہے اور وہ زیر علاج ہیں ان کی حالت تشویشناک ہے۔ سی ٹی ڈی انچارج راجہ عمر خطاب کا کہنا ہے کہ گاڑی میں انکی اہلیہ بھی موجود تھیں جو معجزانہ طورپر محفوظ رہیں اور مذکورہ کارروائی جس طرح کی گئی ہے اس سے معلوم ہوتا ہے کہ وہ مکمل ریکی کر کے آئے تھے ۔ جاں بحق ہونے والاڈرائیور کا تعلق بٹگرام سے تھا ور رشید گوڈیل کے ہمراہ ہی رہتا تھا۔ متحدہ کے رکن قومی اسمبلی رشید گوڈیل کی حالت بدستور تشویشناک ہے آج کا دن ان کے لئے اہم ترین ہوگا‘ لیاقت نیشنل اسپتال کے ترجمان کے مطابق معائنے کیلئے ڈاکٹروں کا پینل تشکیل دیدیا گیا ہے۔‘ وینٹی لیٹر سے ہٹانے کا فیصلہ بھی ڈاکٹروں کا پینل کریگا تاہم کچھ حالت میںبہتری کے باعث رشید گوڈیل کو وینٹی لیٹر سے آکسیجن کی مقدار کم کردی گئی ہے۔

رشید گودیل کے ڈرائیور کی نماز جنازہ میت بٹگرام روانہ کردی گئی
کراچی(کرائم رپورٹر)متحدہ کے رکن قومی اسمبلی عبدالرشید گوڈیل پر حملے میں جاں بحق ہونے والے ان کے ڈرائیور عبدالمتین کی نماز جنازہ بہادر آبادسی پی برار سوسائٹی بلاک تین میں واقعہ مقامی مسجد میں ادا کی گئی ،جس میں مقتول کے رشتے داروں سمیت بڑی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی ،نماز جنازہ کے بعد عبدالمتین کی میت تدفین کیلئے آبائی علاقے بٹگرام روانہ کردی گئی ہے۔

آج صبح تک رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملے
کی ایف آئی آر درج نہ ہو سکی
کراچی( مانیٹرنگ ڈیسک) آج صبح تک متحدہ قومی موومنٹ کے رہنما سینیٹر رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملے کی ایف آئی آر درج نہ ہوسکی۔ تاہم قاتلانہ حملے کی ابتدائی رپورٹ تیار کر لی گئی۔ دوسری جانب آج لیاقت نیشنل اسپتال میں ڈاکٹر سلمان کی قیادت میں18 رکنی وفد میڈیکل بورڈ نے رشید گوڈیل کا طبی معائنہ کیا۔ اس دوران صبح6 بجے سے رشید گوڈیل کو مصنوعی آکسیجن کی فراہمی کم کرنے کیلئے وینٹی لیٹر مشین کی رفتار آہستہ کر دی گئی۔ دوسری جانب پولیس کی ابتدائی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملے سے ایک گروپ نے ریکی کی تھی۔

 

Tags: