اقتصادی راہداری ناکام بنانے کی سازش کراچی میں امن خراب کرنے کا خطرناک منصوبہ

August 19, 2015 4:35 pm0 commentsViews: 29

پاکستان دشمن بیرونی طاقتوں نے انتہائی تربیت یافتہ دہشت گرد گروہ کو ٹاسک دیدیا
پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کی کامیابی سے دنیا بھر کی معاشی سرگرمیوں کا مرکز پاکستان منتقل ہوجائے گا،دبئی پورٹ بھی ویران ہوجائے گا،ایم کیو ایم کے رہنما رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملہ بھی اسی سلسلے کی کڑی ہے
کراچی میں جاری آپریشن مزید تیز کرنے کا فیصلہ،وزیراعظم نے آج کراچی میں اپیکس کمیٹی کا اجلاس طلب کرلیا، آرمی چیف کی بھی شرکت کا امکان، اجلاس میں دہشت گردوں کی نئی چالوں کے تدارک پر غور کیاجائے گا
کراچی( اسٹاف رپورٹر/نیوز ڈیسک) پاکستان دشمن بیرونی طاقتوںنے پاک چین اقتصادی راہداری منصوبہ اور پاکستان کا معاشی استحکام روکنے کیلئے ایک انتہائی تربیت یافتہ دہشت گرد گروہ کو کراچی میں امن خراب کرنے کا ٹاسک دیدیا ہے‘ تفصیلات کے مطابق ملک بھر میں دہشت گردی کیخلاف پاک فوج کی کارروئیوں اور امن و امان کی بحالی کے بعد بھارت سمیت بعض دیگر پاکستان دشمن ممالک ایک بار پھر کراچی سمیت پاکستان بھر میں امن و امان کی صورتحال خراب کرنے کیلئے سرگرم ہوگئے ہیں‘ ذرئع نے بتایا کہ پاکستان بلکہ خطے کے معاشی استحکام کیلئے پاک چین اقتصادی راہداری نہایت اہمیت کی حامل ہے‘ اس منصوبے کی کامیابی سے د نیا بھر کی معاشی سرگرمیاں پاکستان منتقل ہوجائیں گی جبکہ دبئی پورٹ مکمل طور پر ویران ہوجائیگا‘ ذرائع کے مطابق اقتصادی راہداری منصوبہ کامیاب ہونے کے بعد گوادر پورٹ کی عالمی سطح پر تجارتی سرگرمیوں کے لحاظ سے اولیت حاصل ہوجائیگی جو بعض بیرونی طاقتوں کو کسی صورت منظور نہیں‘ ذرائع کے مطابق پاکستان دشمن چاہتے ہیں کہ کراچی میں دوبارہ بد امنی کی صورتحال پیدا ہوجائے اور معاشی سرگرمیوں کی مستحکم ہوتی ہوئی صورتحال خراب ہو تاکہ کوئی بھی بیرونی کمپنی یہاں کام کرنے پر آمادہ نہ ہو‘ ذرائع نے کہا کہ بیرونی طاقتوں کی جانب سے12 افراد پر مشتمل گروہ کو ٹاسک دیا گیا ہے کہ کراچی میں امن خراب کیا جائے جوکہ ہر ممکن کوشش کررہے ہیں باخبر ذرائع کا کہنا ہے کہ پچھلے چند دنوں میں پولیس پر حملے بھی اسی گروہ کی کارروائی معلوم ہوتی ہے جبکہ گزشتہ روز ایم کیو ایم کے رہنما اور رکن قومی اسمبلی رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملہ بھی کراچی کے امن کو خراب کرنے کی سازش تھی‘ باخبر ذرائع نے بتایا کہ پاک چین منصوبہ کامیاب ہوجانے کی صورت میں دبئی پورٹ مکمل تباہ ہوجائیگا اور پاک چین منصوبہ گوادر پورٹ کو ہر معاملے میں ترجیح دی جائیگی‘ جس کی وجہ سے کچھ بیرونی طاقتیں کراچی میں امن خراب کرکے اس منصوبے کو ناکام بنانا چاہتی ہیں اس منصوبے کے کامیاب ہوجانے کے باعث کراچی سمیت پاکستان بھر کو معاشی فوائد ملیں گے اور اس سے پاکستانی معیشت مستحکم ہوگی‘ دوسری جانب وزیراعظم نواز شریف آج بدھ کراچی میں ایپکس کمیٹی کے اجلاس میں شرکت کریں گے جس میں شہر میں دہشت گردی کے بڑھتے واقعات کے تناظر میں امن عامہ کی صورتحال پر غور کیا جائیگا‘ امکان ہے کہ چیف آف آرمی اسٹاف جنرل راحیل شریف بھی اجلاس میں شرکت کریں گے‘ وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار اور وزیر خزانہ اسحاق ڈار بھی اس موقع پرموجود ہوں گے‘ ذرائع نے بتایا ہے کہ حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ کراچی آپریشن بھر پور طریقے سے جاری رہے گا اور اس میں مزید تیزی لائی جائیگی‘ اجلاس میں دہشت گردوں کی جانب سے اختیار کی جانے والی نئی چالوں اور طریقوں کے تدارک پر بھی بحث کی جائیگی‘ صوبائی حکومت آپریشن کے نتیجے میں ملنے والی کامیابیوں اور مستقبل کی حکمت عملی کے حوالے سے رپورٹ پیش کریگی۔

Tags: