رشید گوڈیل پراسپتال میں ایک اور حملے کا خدشہ متحدہ رہنما کی سیکورٹی میں کئی گنا اضافہ کردیا گیا

August 22, 2015 2:05 pm0 commentsViews: 22

10افسران اور 70سے زائد پولیس اہلکار حفاظت پر مامور
حادثے کے بعد کار چلانے والے شخص سے بھی تفتیش کا آغاز کردیا گیا
کراچی( کرائم ڈیسک) حساس ادارے کی سفارش پر پولیس نے لیاقت نیشنل اسپتال میں زیر علاج متحدہ کے رکن قومی اسمبلی رشید گوڈیل کی سیکورٹی میںکئی گنا اضافہ کردیا‘ حادثے کے بعد کار چلانے والے شخص سے تفتیش کا باقاعدہ آغاز کردیا گیا‘ تفصیلات کے مطابق حساس ادارے نے ایک مراسلے میں عبدالرشید گوڈیل پر اسپتال میں ایک اور حملے کا خدشہ ظاہر کرتے ہوئے ان کی سیکورٹی بڑھانے کی سفارش کی تھی‘ ایس پی عابد قائم خانی نے بتایا کہ رشید گوڈیل کی سیکورٹی کا جائزہ لیا گیا تو کئی خامیاں سامنے آئیں جس کے بعد سیکورٹی بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے اور اب 10 افسران‘70 سے زائد اہلکار اور 6پولیس موبائلوں کو اسپتال کے اندر اور باہر تعینات کیا گیا ہے‘ ڈی ایس پی ناصر لودھی نے بتایا کہ انسپکٹر رینک کے3 افسران کو سیکورٹی کا نگراں بنایا گیا ہے اور ہر افسر اپنے اہلکاروں کیساتھ8 گھنٹے کی شفٹ میں ڈیوٹی کریگا‘ ذرائع کے مطابق حادثے کے بعد کار چلانے والے شخص نے تفتیش میں اہم انکشافات کئے ہیں اور معلومات پولیس کو فراہم کرتے ہوئے رشید گوڈیل زخمی حالت میں کار آغاخان اسپتال لے جانے کی درخواست کی جب میں نے کار کا رخ آغا خان اسپتال کی جانب کیا تو ملزمان نے تعاقب شروع کردیا اور کئی بار گاڑی رکوانے کی کوشش کی لیکن میں رفتار بڑھائے رکھی اور جب لیاقت نیشنل کے سامنے ملزمان نے فائرنگ کیلئے پوزیشن سنبھالی تو میں نے گاڑی اسپتال میں ہی داخل کردی‘2 ملزمان حملہ آور تھے جبکہ ان کے بیک اپ پر بھی 2 افراد موجود تھے اور فاصلے پر ایک مشکوک گاڑی بھی موجود تھی۔

Tags: