کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم کو پیشہ ورانہ انداز میں چلایا جائے‘وزیر اعلیٰ سندھ

August 25, 2015 1:03 pm0 commentsViews: 26

جدید سسٹم سے مجرمانہ سرگرمیوں کی نشاندہی کے ساتھ ٹریفک نظام میں بہتری آئے گی اور پولیس کارروائیوں کو بھی مانیٹر کیا جاسکتا ہے
محکمہ پولیس کے 200 کیمرے سسٹم سے منسلک کئے گئے ہیں‘ کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم کے افتتاح کے موقع پر وزیر اعلیٰ کو بریفنگ
کراچی( اسٹاف رپورٹر) وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا ہے کہ کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر سے مجرمانہ سرگرمیوں کی نشاندہی ہونے کے ساتھ ساتھ ٹریفک نظام میں بہتری آئے گی۔ اور کسی بھی واقعے کی صورت میں پولیس کی بروقت کارروائی کو بھی مانیٹر کیا جا سکتا ہے۔ اس لئے ضروری ہے کہ اس نظام کو پیشہ وارانہ انداز میں چلایا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے120 ملین روپے کی لاگت سے وزیر اعلیٰ ہائوس میں قائم کئے جانے والے کمانڈ اینڈ سینٹر کا افتتاح کرنے کے موقع پر کیا۔ اس موقع پر صوبائی وزراء نثار کھوڑو، ڈاکٹر سکندر میندھرو، گیان چند اسرانی، مکیش کمار چائولہ، معاونین خصوصی وقار مہدی، راشد حسین ربانی، صدیق ابو بھائی، آئی جی سندھ پولیس غلام حیدر جمالی و دیگر اعلیٰ افسران بھی موجود تھے۔ سیکریٹری انفارمیشن ٹیکنا لوجی نے وزیر اعلیٰ سندھ کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ اس وقت پولیس ڈپارٹمنٹ کے200 کیمروں کو کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر سے لنک کیا گیا ہے اور اس ہفتے کے آخر میں کے ایم سی کے1800 کیمرے بھی اس نظام سے منسلک کئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ وی وی آئی پی پروگرام اور موومنٹ کو بھی اس سینٹر کے ذریعے خصوصی انتظامات کرکے مانیٹر کیا جا سکتا ہے۔ آئی جی سندھ پولیس غلام حیدر جمالی نے بتایا کہ محکمہ پولیس کی جانب سے نصب کئے گئے کیمرے 2 میگا پکسل کے ہیں تاہم ہم ایک غیر ملکی ادارے سے مذاکرات کر رہے ہیں تا کہ سرویلنس نظام کو اپ گریڈ کرنے کے ساتھ ساتھ8 میگا پکسل کے کیمرے نصب کئے جائیں جس سے فوٹیج کے معیار میں کئی گناہ اضافہ ہوگا۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے سرور روم ، ریکارڈنگ سسٹم کا معائنہ کیا اور متعلقہ حکام کو موجودہ سسٹم کو مزید بہتر اور اپ گریڈ کرنے کیلئے احکامات جاری کئے۔

Tags: