صبح سویرے سینٹرل جیل میں دہرے قتل کے مجرم کو پھانسی دیدی گئی

August 26, 2015 4:40 pm0 commentsViews: 24

شاہد محمود نے1998 میں ڈکیتی کے دوران مزاحمت کرنے پر ماں اور بیٹی کو قتل کر دیا تھا
کراچی( کرائم رپورٹر) صبح سویرے سینٹرل جیل میں دہرے قتل کے مجرم کو پھانسی دے دی گئی‘ مجرم نے1998 ء میں دوران ڈکیتی مزاحمت پر ماں بیٹی کوفائرنگ کرکے قتل کیا تھا‘ تفصیلات کے مطابق سینٹرل جیل میں آج صبح دہرے قتل کے مجرم شاہد محمود کو تختہ دار پر لٹکا دیا گیا ہے‘ مجرم شاہد محمود نے1998 ء میں فائرنگ کرکے ماں بیٹی کو قتل کیا تھا‘ مجرم نے نیپئر تھانے کی حدود میںا یک گھر میں دوران ڈکیتی مزاحمت پر دونوں کو قتل کیا تھا‘ چند روز قبل مجرم شاہد محمود کے ریڈ وارنٹ جاری کئے گئے تھے‘ شاہد محمود کو 23دسمبر 1998ء کو عدالت نے سزائے موت سنائی تھی ‘شاہد محمود نے ہائیکورٹ اور سپریم کورٹ میں سزا کیخلاف اپیل بھی کی تھی‘ شاہد محمود کی اپیل ہائی کورٹ نے23دسمبر 1998 ء اور سپریم کورٹ نے17 مئی 2000 ء کو مسترد کردی تھی جس کے بعد شاہد محمود نے صدر مملکت کو بھی رحم کی اپیل کی تھی اس وقت کے صدر مملکت نے شاہد محمود کی رحم کی اپیل یکم اگست 2000 ء کو مسترد کردی تھی۔

Tags: