سابق چیئرمین اوگرا طور خم کے ذریعے افغانستان فرار ہو کر دبئی چلا گیا تھا

August 28, 2015 4:42 pm0 commentsViews: 26

مجھے جبری رخصت پر بھیجنے میں سابقہ حکومت کا ہاتھ تھا، کچھ کھیل میڈیا اور عدلیہ نے بھی کھیلا
ڈاکٹر عاصم مجھے ہٹا کر مرضی کا شخص لانا چاہتا تھا، پیپلزپارٹی سے میرا کوئی تعلق نہیں، توقیر صادق
اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک) سابق چیئر من اوگرا توقیر صادق نے کہا ہے کہ الزامات صرف پیپلز پارٹی کے لوگوں پر لگائے جا رہے ہیں، میرا پیپلز پارٹی کے ساتھ تعلق نہیں ہے صرف جہانگیر بدر کے ساتھ تعلق ہے۔ مجھے بیرون ملک جانے کے بعد پتا چلا کہ میرا نام ای سی ایل میں شامل ہے۔ میں طور خم بارڈر کے ذریعے افغانستان گیا پھر دبئی گیا۔ میرے گورنر ہائوس میں چھپنے کی خبر میں صداقت نہیں ہے۔ نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں اوگرا کے قیام سے ہی اس کی ٹیم میں شامل تھا۔ ادارے کی پہلی لیگل ٹیم میں شامل تھا۔ ڈاکٹر عاصم مجھے ہٹا کر مرضی کا شخص لانے میں دلچسپی رکھتے تھے، مجھے جبری رخصت پر بھیجنے میں سابقہ حکومت کا ہاتھ تھا۔ کچھ کھیل حکومت کا تھا اور کچھ عدلیہ کا بھی ہاتھ تھا۔ ایک بڑا میڈیا گروپ بھی اس کھیل کا حصہ تھا۔ سپریم کورٹ میں میری تعیناتی غیر قانونی قرار دی گئی۔

Tags: