تمام مطالبات منظور ہونے پر ہی اسمبلیوں میں جائینگے‘ الطاف حسین

September 1, 2015 1:53 pm0 commentsViews: 21

پیپلز پارٹی کے چند بیوروکریٹس اور سابق وفاقی وزیر کو گرفتار کیا گیا تو ان کو فوج اور رینجرز کے اقدامات غلط نظر آنے لگے
میری زندگی میں ہماری تحریک کو کامیابی ملی تو ایم کیو ایم کو مغلظات بکنے والے ٹی وی چینلز کو عوامی احتساب کا سامنا کرنا پڑے گا
لندن( نیوز ڈیسک) متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ ایم کیو ایم بات چیت اور مذاکرات کے ذریعہ مسائل کے حل پر یقین رکھتی ہے۔ تاہم ایم کیو ایم کے تمام رہنمائوں‘ ذمہ دارون اور کارکنوں کا یہ اٹل فیصلہ ہے کہ اگر وفاقی حکومت‘ ایم کیو ایم کے تمام مطالبات منظور کریگی تو ہم اسمبلیوں میں جائیں گے ورنہ یہ اسمبلیاں حکومت کو مبارک ہوں‘ یہ بات انہوں نے نائن زیرو کراچی اور حیدر آباد میں رابطہ کمیٹی کے ارکان اور مختلف شعبہ جات کے ذمہ داران کے مشترکہ اجلاس سے ٹیلی فون پر خطاب کرتے ہوئے کہی۔ اپنے خطاب میں الطاف حسین نے کہا کہ کل تک جو لوگ کراچی آپریشن کو جائز قرار دیتے رہے ہیں اور کہتے تھے کہ یہ آپریشن ایم کیو ایم کیخلاف نہیں ہوہا بلکہ دہشت گردوں کیخلاف ہورہاہے تو آج وہی لوگ کراچی آپریشن پر انگلیاں اٹھارہے ہیں‘ جب پیپلز پارٹی کے چند بیورو کریٹس اور سابق وفاقی وزیر ڈاکٹر عاصم کو گرفتار کیا گیا تو انہیں فوج‘ رینجرز اور وفاق کے وہی اقدامات ناجائز اور غلط لگنے لگے جنہیں وہ کل تک جائز قرار دیا کرتے تھے‘ انہوں نے کہا کہ اگر میری زندگی میں تحریک کو کامیابی ملی تو ایم کیو ایم کو مغلظات بکنے والے ٹی وی چینل کو عوامی احتساب کا سامنا کرنا پڑیگا۔

Tags: